شہباز شریف کو ہٹایا گیا تو حالات خراب ہوں گے: خواجہ آصف

سیالکوٹ (پبلک نیوز) خواجہ آصف نے سسٹم بند کرنے کی دھمکی دے دی۔ ان کا کہنا ہے کہ شہباز شریف کو ہٹایا گیا تو حالات خراب ہوں گے۔ عمران خان کے لہجے سے محسوس ہوتا ہے کہ وہ انتہائی پریشان ہیں اور سیاسی لوگ ہر وقت الیکشن کے لیے تیار رہتے ہیں۔

 

سیالکوٹ میں میڈیا سے گفتگو میں خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ حکومت خود اپنی دشمن ہے، پہلی مرتبہ وزیراعطم آئی ایم ایف کے پاس گیا۔ انہوں نے کہا تھا کہ آئی ایف کے پاس جانے سے بہتر ہے خودکشی کرلوں۔ گزشتہ چھ ماہ میں حکومت نے صرف پرانے منصوبوں پر تختیاں ہی لگائی ہیں۔

 

 

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ شہباز شریف کو پبلک اکاؤنٹس کمیٹی سے ہٹانے پر حالات بگڑیں گیں۔ کنٹینز پر نہیں چڑھنا چاہتے۔ مسلم لیگ ن بھی نظام کو منجمد کر سکتی ہے۔ این آر او صرف وزیراعظم کی ہمشیرہ کو ملا ہے۔ حکومت میاں نواز شریف کی بیماری کا فائدہ اٹھانا چاہتی ہے۔

 

مسلم لیگ (ن) کے رہنما کا مزید کہنا تھا کہ خارجہ پالیسی بھی درست سمت میں نہیں، ایک وزیر کہہ رہا تھا کہ کلبھوشن کو بھیج دیا گیا ہے، جیسا وزیراعظم ویسے ہی ان کے وزیر ہیں، ڈر ہے کہ کہیں دیرینہ دوست ہم سے ناراض نہ ہو جائیں۔ عمران خان کے لہجے سے محسوس ہوتا ہے کہ وہ انتہائی پریشان ہیں اور سیاسی لوگ ہر وقت الیکشن کے لیے تیار رہتے ہیں۔

حارث افضل  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں