خیبرپختونخوا کی لیڈی ہیلتھ ورکرز مطالبات کیلئے احتجاج میں بچوں کو بھی لے آئیں

پشاور (پبلک نیوز) خیبرپختونخوا کی لیڈی ہیلتھ ورکرز مطالبا ت کے حق میں سڑکوں پر آ گئیں۔ صوبائی اسمبلی کے سامنے دھرنا دے دیا۔ احتجاج کے باعث ٹریفک کا نظام درہم برہم رہا۔ لیڈی ہیلتھ ورکرز کا کہنا ہے کہ مطالبات کی منظوری تک احتجاج جاری رہے گا۔

تفصیلات کے مطابق پشاورسمیت صوبے بھرکی لیڈی ہیلتھ ورکرز خیبرپختونخوا اسمبلی کے سامنے سراپا احتجاج بنی ہوئی ہیں۔ لیڈی ہیلتھ ورکرز نے صوبائی اسمبلی کے سامنے خیبرچوک میں سڑک کو دونوں اطرف سے بند کر دیا، جس سے گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں۔ لیڈی ہیلتھ ورکرز اپنے بچوں سمیت احتجاج میں شریک ہوئیں۔

لیڈی ہیلتھ ورکرز کامطالبہ ہے کہ کنٹریک ملازمین کو مستقل، پے سکیل میں اضافہ اور ترقیاں دی جائیں۔ گھر بار اور ڈیوٹی چھوڑ کرآنے والی لیڈی ہیلتھ ورکرز کا کہنا ہے کہ مطالبات کی منظوری تک احتجاج جاری رہے گا۔

کئی گھنٹے تک احتجاج کے باوجود محکمہ صحت یا صوبائی حکومت کی جانب سے کسی نے ان سے مذاکرات نہیں کیے۔

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں