لاہور:5ماہ کے دوران شہری 14سو موٹر سائیکلوں ،3سو گاڑیوں سے ہاتھ دھو بیٹھے

لاہور (پبلک نیوز) کروڑوں روپے کی قیمتی گاڑیاں، جدید اسلحہ اور نت نئی فورسز بھی موٹر سائیکل اور گاڑی چوری کی واردتوں کو روکنے میں کامیاب نہ ہوسکی، بڑتے ہوئے جرائم کے سبب شہریوں میں خوف و حراس پیدا ہو گیا۔

پبلک نیوز کے مطابق گزشتہ پانچ ماہ کے دوران چور و ڈاکو 1400کے قریب کروڑوں روپے کی موٹر سائیکلوں اور 300کے قریب قیمتی گاڑیاں چھین کر لے گئے۔ آئی جی پنجاب اور ڈی آئی جی لاہورکے دعوے محض دعوے ثابت ہوئیں۔

شہریوں کے جان و مال کی حفاظت کے لیے بنائی جانے والی نت نئی فورسز بھی موٹر سائیکل اور گاڑی چوری و چھیننے کی وارداتوں کو روکنے میں بری طرح ناکام ہو گئی۔ شہر کی مختلف ڈویژن میں بڑھتی ہوئی وارداتوں کے پیش نظر شہری خوف و حراس میں مبتلا ہو گئے۔

 شہریوں کی کروڑوں روپے مالیت کی قیمتی گاڑیاں،موٹر سائیکلیں اور دیگر وہیکل چوری و چھین لی جاتی ہیں مگر پولیس تماشہ دیکھتی رہتی ہیں۔ ڈولفن فورس پیر و فورس اور کیو آر ایف بھی وارداتوں کو قابو پانے میں ناکام ہو گئیں۔ نئے تعینات ہونے والے ڈی آئی جی رانا شہزاد اکبر نے کہا کہ وارداتوں کو روکنے کے کوششیں جاری ہیں۔ 

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں