شہباز شریف فیملی کے مبینہ فرنٹ مین سے نیب کی تفتیش فیصلہ کن موڑ پرآگئی

لاہور(ادریس شیخ) حمزہ اور سلمان شہباز کے مبینہ فرنٹ مین سے نیب کی تفتیش ختمی مراحل میں داخل، گرفتار ملزمان نے بااثر سیاسی شخصیات کے اثرورسوخ کے خوف سے نیب کو آگاہ کر دیا، بیان ریکارڈ کرانے پر غور بھی شروع کر دیا۔

 

نیب ذرائع کے گرفتار ملزمان نے اہم انکشافات کرنے سے متعلق سیاسی شخصیات سے پہنچنے والے نقصانات سے متعلق تشویش ظاہر کی ہے، جس پر نیب نے تمام گرفتار ملزمان کو دوران جسمانی ریمانڈ حفاظت کی گارنٹی دے دی، نیب ذرائع کا کہنا ہے کہ ملزمان نے دوران تفتیش اہم ترین کرداروں اور رازوں سے پردہ اٹھانے کا عندیہ دے دیا۔

 

ذرائع کے مطابق ملزمان نے نیب کی جانب سے حفاظت سے متعلق یقین دہانی کے بعد اہم سیاسی شخصیات کے خلاف بیان ریکارڈ کروانے پر غور شروع کر دیا، نیب نے سلمان اور حمزہ شہباز مبینہ فرنٹ مین کو گرفتار رکھا ہے۔ منی لانڈرنگ کے الزمات کے تحت گرفتار ملزمان جسمانی ریمانڈ پر نیب کی تحویل میں ہیں۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں