نہتے کشمیریوں کی آواز اعلیٰ ترین سفارتی سطح پر سنی گئی، ملیحہ لودھی

 

نیویارک (پبلک نیوز) اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ پاکستان سلامتی کونسل کے اجلاس کا خیرمقدم کرتا ہے۔ اجلاس سے ثابت ہوگیا کہ مسئلہ کشمیر بھارت کا اندرونی مسئلہ نہیں ہے۔ آج پوری دنیا نے یہ بات مان لی کہ بھارت نے کشمیریوں کے حقوق پامال کیے ہیں۔ کشمیریوں کو قید کیا جا سکتا ہے ان کی آواز نہیں  دبائی جا سکتی۔

 

سلامتی کونسل اجلاس کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پاکستان سلامتی کونسل کے اجلاس کا خیرمقدم کرتا ہے۔ اجلاس پاکستانی وزیر خارجہ کی درخواست پر بلایا گیا۔ بھارت کی جانب سے اجلاس کو روکنے کی کوشش کی گئی۔ ہم مسئلہ کو پرامن طریقے سے حل کرنے کے لیے تیار ہیں۔ بھارت مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزی کر رہا ہے۔

اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ اجلاس سے ثابت ہوگیا کہ مسئلہ کشمیر بھارت کا اندرونی مسئلہ نہیں ہے۔ پاکستان کشمیریوں کی اخلاقی، سیاسی، سفارتی حمایت جاری رکھے گا۔ کشمیر کے عوام اکیلے نہیں ہیں۔ مقبوضہ کشمیر کا معاملہ انسانی حقوق کے دنیا کے سب سے بڑے پلیٹ فارم پر زیر بحث آنا اس بات کا ثبوت ہے کہ مقبوضہ کشمیر بھارت کا اندرونی معاملہ نہیں ہے۔

 

ملیحہ لودھی کا کہنا تھا کہ آج پوری دنیا نے یہ بات مان لی کہ بھارت نے کشمیریوں کے حقوق پامال کیے ہیں۔ کشمیریوں کو قید کیا جا سکتا ہے ان کی آواز نہیں  دبائی جا سکتی۔ پاکستان نے یہ کوشش مقبوضہ جموں و کشمیر کے عوام کے لیے کی ہے اور یہ مسئلے کے حل تک جاری رہے گی۔

احمد علی کیف  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں