شہباز شریف کی ذات پر بغیر ثبوت الزامات لگائے گئے: ملک احمد خان

لاہور(مستنصر عباس) مسلم لیگ ن کے رہنماء ملک احمد خان نے چیئرمین نیب کو عہدے سے ہٹانے کے لئے سپریم کورٹ میں جانے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پارلیمانی کمیٹی میں نیب کی کارستانیوں کے حوالے سے بھی سوالات اٹھائے جائیں۔

 

مسلم لیگ ن کے مرکزی سیکریٹریٹ میں لیگی رہنماؤں نے ہنگامی پریس کانفرنس میں چیئرمین نیب پر الزامات کی بوچھاڑ کرتے ہوئے مستعفیٰ ہونے کا بھی مطالبہ کر دیا۔ ملک احمد خان نے کہا کہ چیئرمین نیب کو متنازعہ کالم کے بعد اپنی پوزیشن واضح کرنی چاہئے تھی۔ ملک احمد خان نے کہا شہباز شریف کی ذات پر بغیر ثبوت الزامات لگائے گئے، صاف پانی کیس، آشیانہ میں شہباز شریف کی گرفتاری نہیں ہونی چاہیے تھی، بے بنیاد، من گھڑت الزامات پر شہباز شریف کو گرفتار کیا گیا، چیئرمین نیب کے خلاف کیس فائل کریں گے۔

لیگی رہنما نے کہا نیب تحریک انصاف کا پلاننگ یونٹ ہے، نیب کی وجہ سے لوگوں نے خودکشیاں شروع کر دی ہیں، چیئرمین نیب نے خود کہا وزراء کیخلاف اس لیے کارروائی نہیں کر رہے کہ حکومت نہ گر جائے۔ چیئرمین نیب نے ملکی نظام کا تماشہ لگا دیا۔ لیگی رہنماؤں نے ملکی معیشت کا پہیہ رکنے کا ذمہ دار بھی چئیرمین نیب کو قرار دیتے ہوئے انہیں حکومت کی بی ٹیم قرار دیا۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں