شہباز شریف ضمیر کے قیدی ہیں، وہ کب تک خاموش رہیں گے؟ملک احمد خان

لاہور (پبلک نیوز) مسلم لیگ ن کے رہنماء اور سابق پنجاب حکومت کے ترجمان ملک احمد خان نے کہا ہے کہ ملتان میٹرو کے معاملے پر لیگل نوٹس بھیجا اس کا بھی عمران خان نے کوئی جواب نہیں دیا۔ شہباز شریف نے خندہ پیشانی سے حالات کا مقابلہ کیا۔

 

مسلم لیگ ن کے رہنماء ملک احمد خان نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ عمران خان نے الزام لگایا کہ شہباز شریف نے پاناما معاملہ دبانے کے لیے 10 ارب کی پیشکش کی، ہم نے عمران خان کو لیگل نوٹس بھیجا، لیکن کوئی جواب نہیں ملا۔ ملتان میٹرو کے معاملے پر لیگل نوٹس بھیجا اس کا بھی عمران خان نے کوئی جواب نہیں دیا۔ عمران خان الزام لگاتے ہیں اور پھر ان کی پوری جماعت الزام لگانا شروع کر دیتی ہے۔

 

ملک احمد خان کا کہنا تھاکہ شہباز شریف پر 56 کمپنیوں کا الزام لگا دیا گیا۔ ہم پہلے دن سے کہہ رہے ہیں کہ آشیانہ اقبال میں سرکاری خزانے سے ایک روپیہ بھی خرچ نہیں ہوا۔ جھوٹے الزامات پر وفاقی اور صوبائی وزیر جھوٹے کیسز پر اثر انداز ہوتے رہے۔ وزراء نے حکومتی وسائل استعمال کرتے ہوئے جھوٹا پروپیگنڈا کیا۔ رمضان شوگر ملز کے معاملے پر بھی الزامات جھوٹے ثابت ہوئے۔

 

ترجمان سابق حکومت ملک احمد خان نے کرپشن کے حوالے سے سوال کرتے ہوئے کہاکہ بتائیں اربوں روپے کی کرپشن کہاں ہوئی؟ ثابت ہو گیا کہ کسی فریق کو فائدہ نہیں پہنچایا گیا۔ نیب کے پاس ثابت کرنے کو کچھ نہیں تھا۔ شہباز شریف نے خندہ پیشانی سے حالات کا مقابلہ کیا، یہ لوگ جھوٹ پر پوری عمارت کھڑی کرتے ہیں۔

 

ملک احمد خان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم بتائیں کہ شہباز شریف پر جو الزام لگائے وہ سب جھوٹے ثابت ہو رہے ہیں۔ وزیراعظم کے الزامات ردی کی ٹوکری میں ڈال دیئے گئے ہیں۔ شہباز شریف ضمیر کے قیدی ہیں، وہ کب تک خاموش رہیں گے؟ ہم نے شہباز شریف کو دن رات کام کرتے دیکھا ہے۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں