پی ٹی ایم کا شمالی وزیرستان میں چیک پوسٹ پر حملہ، 5 اہلکار زخمی

راولپنڈی (پبلک نیوز) آئی ایس پی آر کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ محسن داوڑاورعلی وزیر کی سربراہی میں ایک گروہ نے خارکمر چیک پوسٹ پرحملہ کیا۔ گروہ کی فائرنگ سے 5 فوجی اہلکارزخمی ہوئے جبکہ فائرنگ کے تبادلے میں 3 حملہ آور ہلاک، 10 زخمی ہوئے۔

 

پاک فوج کے شعبہ تعلقات (آئی ایس پی آر) کے جاری کردہ بیان کے مطابق محسن داوڑاورعلی وزیر کی سربراہی میں ایک گروہ نے خار کمر چیک پوسٹ پر حملہ کیا۔ حملہ کے دوران گروہ کی فائرنگ سے 5 فوجی اہلکار زخمی ہوئے جبکہ فائرنگ کے تبادلے میں 3 حملہ آور ہلاک، 10 زخمی ہوئے۔ علی وزیر کو 8 ساتھیوں سمیت حراست میں لے لیا گیا۔ مجمعے کو اشتعال دلانے والا محسن جاوید موقع سے فرار ہو گیا۔

 

آئی ایس پی آر کے جاری کردہ بیانیہ میں کہا گیا کہ پاک فوج کی چوکی پر براہ راست فائرنگ اور اشتعال انگیزی کے باوجود دستوں نے صبروتحمل کا مظاہرہ کیا۔ 24 مئی کو میدان کے قریب ڈوگا گاؤں میں کلئیرنس آپریشن کیا گیا۔ ڈوگا گاؤں سے ہونے والی فائرنگ سے ایک سپاہی کو پیٹ میں گولی لگی تھی۔ آج محسن جاوید اور علی وزیر نےعوام کو اشتعال دلا کر چوکی پر حملہ کر دیا۔ حملے کا مقصد کچھ ممکنہ دہشت گردوں کو رہائی دلانا تھا۔

حارث افضل  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں