منی لانڈرنگ کیس: آصف زرداری، فریال تالپور نے پیشی کیلئے مہلت مانگ لی

کراچی(پبلک نیوز) سابق صدر آصف علی زرداری اور فریال تالپور کی آج ایف آئی اے میں طلبی، سابق صدر آصف علی زرداری کی جگہ سابق چیئرمین سینیٹ فاروق ایچ نائیک ان کی نمائندگی کرتے ہوئے ایف آئی اے میں پیش ہوئے ۔ جوابات اطمینان بخش نہ ہونے کی صورت میں قانونی کارروائی کی جائے گی۔

فاروق ایچ نائیک لیگل فرم کے وکلا ایف آئی اے اسٹیٹ بینک سرکل میں پیش ہوئے۔ وکیل نے موقف اختیار کیا کہ آصف علی زرداری اور فریال تالپور کی انتخابات میں مصروفیات ہے، مصروفیات کے باعث پیش ہونے کے لیے مہلت مانگ لی۔ ایف آئی اے حکام کے مطابق پچیس جولائی سے اکتیس جولائی کے درمیان پیش ہو سکتے ہیں۔ آج ایف آئی نے درخواست وصول کی ہے، مزید کارروائی قانون کے مطابق ہو گی۔ مہلت دیے جانے کا فیصلہ ایف آئی اے کے اعلی حکام کریں گے۔

نوٹس کے مطابق 20 مئی 2014 کو سمٹ بینک کے اکاونٹ میں ڈیڑھ کروڑ روپے جمع کیے گئے۔ رقم زرداری گروپ کے اکاونٹ میں جمع کرائی گئی۔ آصف زرداری اور فریال تالپور زرداری گروپ پرائیوٹ لمیٹیڈ کے شئیر ہولڈر ہیں۔ آصف زرداری اور ان کی ہمشیرہ فریال تالپور کو منی لانڈرنگ کیس میں ایف آئی اے نے آج بیان ریکارڈ کرانے کیلئے طلب کر رکھا تھا۔

ایف آئی اے کی جانب سے بے نامی اکاؤنٹ سے منی لانڈرنگ کیس میں 32 افراد کے خلاف کارروائی کی جا رہی ہے۔ جس میں آصف علی زرداری، فریال تالپور بھی شامل تفتیش ہیں، گزشتہ دنوں اسی معاملہ میں نجی بینک کے صدر حسین لوائی کو بھی گرفتار کیا گیا تھا۔ سابق صدر کو زرداری گروپ لمیٹڈ کے شیئر ہولڈر اور فریال تالپور کو زرداری گروپ کی ڈائریکٹر کی حیثیت سے طلب کیا گیا۔

ایف آئی اے حکام کے مطابق آصف زرداری ، فریال تالپور ذاتی حیثیت میں نہ بھی آئیں تو اعتراض نہیں، دونوں کے جوابات کا جائزہ لیا جائے گا، جوکہ اگر اطمینان بخش نہ ہوا تو اس صورت میں قانونی کارروائی کی جائے گی۔ بلاول ہاؤس اور فریال ہاؤس کی دیوار پر ان کی طلبی کے نوٹس چسپاں کردیئے گئے تھے۔

ایف آئی اے حکام کے مطابق دونوں سے پیسوں کی منی ٹریل اور انکم ٹیکس ریٹرنز پوچھے جائیں گے۔ کاغذات پر اب تک 35 ارب روپے کی منی لانڈرنگ ثابت ہوئی ہے، اگر آصف زرداری اور فریال تالپور بیان ریکارڈ نہیں کراتے تو دوبارہ نوٹس جاری کیا جائے گا۔ دوسری جانب ایف آئی اے اسٹیٹ بینک سرکل میں حسن لوائی نے بیان ریکارڈ کرا دیا حسین لوائی کا کہنا تھا میں نے منی لارنڈرنگ نہیں کی مجھ پر منی لارنڈرنگ کا الزام نہیں مجھ پر جعلی اکاؤنٹس کا الزام ہے۔

عطاء سبحانی  4 ماه پہلے

متعلقہ خبریں