نیب انتقامی ادارہ بن چکا، اس سے انصاف کی توقع نہیں: مولانا فضل الرحمان

لاہور (پبلک نیوز) جمعیت علماء اسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے جاتی امراء جا کر مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کی عیادت کی اور ان کی خیریت دریافت کی۔

 

مولانا فضل الرحمان کی جاتی امرا میں نوازشریف سےملاقات ہوئی۔ جے یو آئی سربراہ نے سابق وزیراعظم کی عیادت کی اور سیاسی صورتحال، حکومت مخالف ممکنہ تحریک پر بھی تبادلہ خیال کیا۔

 

دونوں رہنماؤں کی ملاقات تقریباً 2 گھنٹے تک جاری رہی جس کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے مولانا فضل الرحمان نے کا کہنا تھا کہ نواز شریف سے جیل میں بھی ملاقات کا ارادہ تھا۔ ملک میں اس وقت بدترین مہنگائی ہے۔ حکومت کی اکثریت جعلی ہے۔ انتخابات  کے بعد تمام اپوزیشن ایک صف پر تھی۔ آنے والے دنوں میں آصف زرداری سے بھی ملاقات ہوگی۔ جے یو آئی کی سوچ میں کوئی فرق نہیں۔ نوازشریف اور آصف زرداری کی ملاقات میں کوئی رکاوٹ نہیں۔ اصل حکومت وزیراعظم کی نہیں کسی اور کی ہے۔

سربراہ جے یو آئی (ف) کا کہنا تھا کہ ملاقات میں ملک کی موجودہ صورتحال پر بات چیت ہوئی۔ اپوزیشن سوچ میں کوئی فرق نہیں۔ مستبقل میں کیا حکمت عملی ہوگی ہر پارٹی کو اپنے فورم پر طے کرنا ہے۔ نیب سے انصاف کی توقع نہیں کی جاسکتی۔ نیب کے حوالے سخت فیصلے لینے ہوں گے۔

حارث افضل  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں