شاعر،ادیب اور صحافی منیر نیازی کی 91 ویں سالگرہ

لاہور (پبلک نیوز) شاعر، ادیب اور صحافی منیر نیازی کی 91 ویں سالگرہ آج منائی جارہی ہے۔ منیر نیازی انسانی دکھوں کو زبان دینے والے شاعر کے طور پر جانے جاتے ہیں۔

 

9 اپریل 1928 کو ہندوستان کے ضلع ہوشیار پور میں آنکھ کھولنے والے بے باک شاعر منیر نیازی افقِ شاعری کا درخشاں ستارہ تھے۔ ان کا شمار ممتاز ترین جدید شعراء میں ہوتا ہے۔ منفدر اور اچھوتا اسلوب ،ا ن کے کلام کا خاصہ ہے۔

 

منیر کی بنیادی شناخت غزل تھی۔ تاہم ان کی نظمیں اور فملی گیت بھی اپنی مثال آپ ہیں۔ منیر نیازی کو مزاحمتی شاعر بھی کہا جاتا ہے۔ ان کلام اور اندازِ بیاں اپنے ہم عصروں میں سب سے الگ اور سب سے جدا ہے۔ منیر نیازی کے اردو شاعری کے 13، پنجابی کے 3 اور انگریزی کے 2 مجموعے شائع ہوئے۔

 

منیر نیازی کو معاشرتی سختیوں کو الفاظ کا روپ عطا کرنے پر حکومت پاکستان نے صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی، ستارہ امتیاز اور اکادمی ادبیات پاکستان نے 'کمال فن ایوارڈ' سے نوازا، 26 دسمبر 2006 کو اپنے عہد کا یہ ادبی دنیا کا آفتاب ہمیشہ کے لیے غروب ہو گیا۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں