'وی آئی پی چور' جمہوریت کے چیمپئن بن کر دھاڑنے لگے ہیں: مراد سعید

پبلک نیوز: وفاقی وزیر برائے مواصلات و ڈاک مراد سعید نے کہا ہے کہ دربارِ زرداریہ پر حاضری کے بعد آلِ شریف کے تیور بگڑے بگڑے اور لہجے اکھڑے اکھڑے دکھائی دے رہے ہیں۔ نیب کی پیشی بھگتنے کے بعد میاں شریف مرحوم کی اولاد نہ جانے خود کو "ٹارزن" کیوں سمجھنے لگتی ہے۔ حمزہ شہباز کے تایا بھی نیب میں پیشی کے بعد آنکھیں دکھاتے اور بڑھکیں لگاتے تھے۔

حمزہ شہباز کی پریس کانفرنس پر پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے ردعمل دیتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ مقصد صرف یہ تھا اور ہے کہ اداروں کو دھمکایا جائے تاکہ احتساب سے نجات مل سکے۔ تایا جان بھی غلط فہمی کا شکار تھے کہ اس طرح کے حربوں سے بچ نکلنے میں کامیاب ہوجائیں گے۔

ہمارے "وی آئی پی" چوروں کا نرالا انداز ہے کہ اندر تفتیش بھگتتے اور باہر نکلتے ہی جمہوریت کے چیمپئنز بن کر دھاڑنے لگتے ہیں۔ بڑھکیں مارنے اور ہمیں آنکھیں دکھانے سے آپ کو معصومیت کا پروانہ تھوڑی ملنا ہے۔ تایا جان کیطرح ناٹک رچانے کی بجائے حمزہ شہباز توجہ رسیدیں دینے اور مقدمہ بہتر انداز میں لڑنے پر مرکوز رکھیں تو انکے حق میں بہتر ہوگا۔

اپنی صفائی میں ان کے پاس کہنے کو کچھ نہیں تو سادہ سے انداز میں جرم کا اقرار کریں اور لوٹ مار کا مال واپس کرکے جان چھڑوائیں۔ ساری "جمہوریت بازی" کے باوجود بھی جان نہ چھوٹ پائی تو تایا جان کیطرح خدانخواستہ آپ کو بھی صحت کا کوئی عارضہ نہ لاحق ہوجائے۔

ایسی صورت میں علاج بھی پاکستان ہی سے کروانا پڑے گا کیونکہ آجکل باہر جانے کی اجازت بھی نہیں ملا کرتی۔ والد صاحب کی طرح چقمہ دیکر فرار ہونے کے خاصے مواقع بھی آپ کو دستیاب نہیں۔

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں