نواز شریف کو فرار کی راہ مل جائے تو 'ووٹ کی عزت' فوری بحال ہو جائے گی: مراد سعید

پبلک نیوز: وفاقی وزیر مواصلات و ڈاک مراد سعید نے کہا ہے کہ وقت نے ثابت کیا کہ جس شخص کے بیٹھنے سے وزارت عظمیٰ کے منصب کی توہین ہوتی تھی اسے حقیقی جگہ پر پہنچایا جاچکا ہے۔ ابو کے بعد مفرور چچا کے گرد گھیرا تنگ ہوا تو دوبارہ "ووٹ کی عزت" کا خیال آگیا۔

نون لیگ کے اجلاس اور مریم نواز کے بیان پر رد عمل دیتے ہوئے انھوں نے نہایت دلچسپ تبصرہ کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ جووزیراعظم کو نہ ماننے کے بیان داغ رہی ہیں وہ تو اپنے نام پر موجود جائیدادیں بھی تسلیم نہیں کرتی تھیں۔ ان کی لندن تو کیا پاکستان میں بھی کوئی جائیداد نہیں اور وہ تو اپنے والد کے ساتھ رہتی تھیں۔

انھوں نے کہا کہ ستم ظریفی تو یہ ہے کہ والد ان کی وجہ سے آج کل کوٹ لکھپت میں رہتے ہیں۔ "ووٹ کو عزت" دلوانے والے پچھلے کئی ماہ سے کس بل میں چھپے ہوئے تھے۔ "ووٹ کی عزت" احتساب کی رفتار سے مشروط ہے۔ ابھی والدِ گرامی کو فرار کی راہ مل جائے ووٹ کی عزت پوری آب و تاب سے بحال ہو جائے گی۔

مراد سعید نے واضح کیا کہ عمران خان مقبول ترین وزیراعظم ہی نہیں محبوب ترین سیاسی قائد بھی ہیں۔ "ووٹ کو عزت" دلوانے والا نام نہاد تماشا پہلے بھی ناکام ہوا، اب کی بار بھی ہو گا۔ لوٹی گئی دولت واپس کرنے اور سیاست سے بوریا بستر گول کرنے کے علاوہ کوئی آپشن دستیاب نہیں۔ یہ بات جتنی جلد اپنے دماغ میں بٹھا لیں اتنا ہی انکے حق میں بہتر ہے۔

احمد علی کیف  4 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں