فرشتہ سے درندگی، ہولناک انکشافات، انسان اور جانور، دونوں نے ہی نوچ ڈالا

اسلام آباد (پبلک نیوز) ننھی فرشتہ قتل و زیادتی کیس کے معاملے پر دل ہلا دینے والے انکشافات سامنے آ گئے۔ پولیس ذرائع کے مطابق 15 مئی کی شام فرشتہ والدہ کو اپنی دوست وفا کے گھر جانے کا کہہ کر نکلی، جیو فینسنگ کے مطابق فرشتہ اپنی دوست کے گھر نہیں آئی۔

 

ننی فرشتہ کے جسم سے انسانوں کے ساتھ جانوروں نے بھی اپنی بھوک مٹائی۔ 11 سالہ بچی فرشتہ کی پوسٹ مارٹم رپورٹ مکمل کر لی گئی، تفصیلات منظر عام پر آ گئیں۔

 

پولیس ذرائع کے مطابق 15 مئی کی شام فرشتہ والدہ کو اپنی دوست وفا کے گھر جانے کا کہہ کر نکلی لیکن دوست کے گھر نہیں پہنچی۔ پوسٹ مارٹم رپورٹ کے مطابق بچی کے پیٹ پر خنجر لگنے کا واضح نشان موجود ہے، فرشتہ کی آنکھیں، دماغ اور پاؤں جانوروں نے نوچ کھائے، بچی کے کہیں سے بھی کپڑے پھٹے ہوئے نہیں تھے، موت کو زیادہ وقت گزرنے کے باعث جسم میں کیڑے پڑ چکے تھے، کیڑے پڑنے کی وجہ سے بچی  کے جسم سے شواہد اکٹھے نہیں ہوسکتے۔

 

ڈاکٹروں کی رائے کے مطابق ممکنہ طور پر بچی کی موت زیادہ خون بہنے کی وجہ سے ہوئی۔ پوسٹ مارٹم سے شواہد نہ ملنے کے بعد پولیس کی تمام امیدیں ڈی این اے رپورٹ پر مرکوز ہیں، بچی فرشتہ کی ڈی این ای رپورٹ منگل کے روز پولیس کو موصول ہونے کا امکان ہے۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں