سپريم کورٹ نے جے آئی ٹی کی بدنيتی ظاہر کر دی ہے: مرتضیٰ وہاب

کراچی(منیر ساقی) جعلی بينک اکاؤنٹس کيس پر سپريم کورٹ کا فيصلہ۔ مرتضی وہاب کا کہنا ہے کہ سازش کرنے والوں کو منہ کی کہانا پڑی، جو استعفیٰ مانگ رہے تھے اب انہيں مستعفیٰ ہونا چاہيئے۔

 

بلاؤل بھٹو کو سپريم کورٹ نے کلين چٹ دے دی، جيالے فرنٹ فٹ پر آکر کھيلنے لگے۔ اسپیکر آغا سراج درانی بولے قیادت پر شروع دن سے کیس بنائے جاتے رہے ہیں۔ پیپلز پارٹی قیادت نے ہمیشہ کیسز کا سامنا کیا ہے۔ سندھ اسمبلی ميں ميڈيا سے گفتگو کرتے ہوئے صوبائی مشير اطلاعات و قانون مرتضی وہاب جارہانہ موڈ ميں دکھائی ديئے انہوں نے کہا کہ پيش گوئياں کرنے والے؟ پيپلزپارٹی کے خاتمے کا خواب ديکھنے والے کدھر ہيں؟

مرتضی وہاب نے کہا کہ سپريم کورٹ نے جے آئی ٹی کی بدنيتی ظاہر کر دی ہے۔ ہم نے پہلے ہی کہا تھاکہ سياسی انتقام کا نشانہ بنايا جا رہا ہے۔ صوبائی مشير اطلاعات و قانون نے مزيد کہا کہ وزير اعلی سے استعفیٰ کا مطالبہ کرنے والے کو اب اخلاقی طور پر مستعفیٰ ہونا چاہيئے۔ وفاقی حکومت اپنی پاليسيوں پر نظرثانی کرے۔

عطاء سبحانی  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں