نیب میں جعلی درخواستیں دینے والوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ

لاہور(پبلک نیوز) نیب میں جعلی اور فرضی شکایات دینے والے ہوجائیں ہوشیار، نیب نے جعلی درخواستیں  دینے والوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کر لیا۔ جھوٹی درخواستیں دینے والوں  کو سزائیں اور بھاری جرمانہ کیا جائے گا۔

 

چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کی ہدایت پر نیب نے جھوٹی اور فرضی شکایات دینے والوں کے خلاف کارروائی کا فیصلہ کیا ہے۔ ترجمان نیب کے مطابق جھوٹ پر مبنی اور جعلی درخواستیں دینے والوں کو ایک سال قید اور بھاری جرمانہ یا دونوں سزائیں دی جا سکتی ہیں۔

ترجمان نیب کے مطابق یہ فیصلہ فرضی درخواستوں کی حوصلہ شکنی اور افسران سے اضافی بوجھ ختم کرنے کے لیے کیا ہے، شکایت کنندہ کو مکمل ثبوتوں کے ساتھ بیان حلفی جمع کرانا ہو گا، جبکہ دو ماہ تک تحریری شکایات کی جانچ پڑتال کرنے کے بعد کارروائی کا آغاز کیا جائے گا اورشکایت درست ثابت ہونے پر چار ماہ کے اندر اندر انکوائری کا عمل مکمل کیا جائے گا۔

 

ترجمان نیب کا کہنا تھا کہ نیب شکایت کنندہ کو شکایت کا ڈائری نمبر دے گا جو دو ماہ بعد ٹریک کیا جا سکے گا جس سے شکایت کنندہ کو پتہ چل سکے کہ انکوئری کس مرحلے میں ہے۔

عطاء سبحانی  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں