شریف فیملی کے گرفتار ملازمین نے دوران تفتیش سب کچا چٹھا کھول دیا

لاہور (شاکر اعوان) شریف فیملی کے گرفتار ملازمین نے نے دوران تفتیش سب کچا چٹھا کھول دیا۔ فضل داد عباسی کو قاسم قیوم کے روبرو بیٹھا کر سوالات کیے گیے۔

فضل داد عباسی نے کہا کہ شریف گروپ آف انڈسٹریز کے کیش کو بنکوں میں جمع کرواتا اور نکلواتا تھا۔ میرے ساتھ شریف فیملی کے ریمنٹینس مسرور انور بھی وصول کرتا تھا۔ قاسم قیوم، محمد رفیق اور، منظور احمد K55 سے نقد رقوم لے کر جاتے تھے۔ قاسم قیوم، محمد رفیق اور منظور احمد کو پیکٹ دیئے جاتے ایک پیکٹ میں 10 لاکھ موجود ہوتے تھے۔ ان پیکٹ کے وصولی کے دستخط قاسم قیوم اور ان کے ملازمین کرتے تھے۔

نیب ذرائع کے مطابق فضل داد عباسی نے بتایا کہ قاسم قیوم کو کیش K55 سے لاکر دیتا تھا۔  فضل داد عباسی نے بتایا کہ وہ کن کن اکاونٹس میں رقم جمع اور نکلواتے تھے۔ فضل داد عباسی نے بتایا کہ مشتاق چینی شریف گروپ آف انڈسٹریز کا ڈیلر ہے۔ بیرون ممالک سے مشتاق چینی کے اکاونٹس میں رقم منتقل ہوتی تھی۔

بعد ازاں اس کو شریف فیملی اکاؤنٹ میں منتقل کر دیا جاتا۔ غیر ملکی رقم کی وصولی کی نگرانی محمد عثمان کرتے تھے۔ قاسم قیوم کو ایک ٹرانزیکشن کے 9000 تک کی آدائیگی کیجاتی تھی۔ فضل داد عباسی اور مسرور انور شہباز شریف کی رقوم بھی جمع اور نکلواتے تھے۔

فضل داد عباسی نے دوران تفتیش بتایا کہ مری میں شہباز شریف نے پراپرٹی رینٹ، پر دے رکھی ہے۔

احمد علی کیف  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں