نیب نے شریف خاندان کو شمیم شوگر ملز کیس تحقیقات میں شامل تفتیش کر لیا

لاہور(شاکر اعوان) شریف فیملی کی مشکلات میں مزید اضافہ، نیب نے سابق وزیراعظم نواز شریف سے شمیم شوگر ملز کے حوالے سے بھی انکوئری شروع کر دی ہے۔ شمیم شوگر ملز کی خریداری میں منی لانڈرنگ کی رقم استعمال ہونے کا انکشاف ہوا ہے۔

 

نیب نے مریم نواز، یوسف عباس کے بعد نواز شریف کو بھی شمیم شوگر ملز میں شامل تفتیش کر لیا ہے۔ ذرائع کے مطابق نواز شریف، مریم نواز اور یوسف عباس نے شمیم شوگر ملز 1 ارب 20 کروڑ میں خریدی اور اس سلسلے میں منی لانڈرنگ کی رقم استعمال ہونے کا بھی انکشاف ہوا ہے۔ نیب کے مطابق نواز شریف نے مریم نواز، یوسف عباس سمیت دیگر کے ساتھ مل کر ایک سو بیس کروڑ میں شمیم شوگر ملز لگائی۔

 

نواز شریف نے شمیم شوگر ملز لگانے کے لیے فنڈز کے ذرائع نہیں بتائے۔ ذرائع کے مطابق شمیم شوگر ملز کے لیے بھی مبینہ طور پر منی لانڈرنگ کی گئی۔ نیب شمیم شوگر ملز سے متعلق نواز شرہف سے مزید تفتیش کر کے رپورٹ آئندہ سماعت پر عدالت جمع کرائے گا۔

عطاء سبحانی  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں