نیب لاہور کی تگڑی کارروائی، قومی خزانہ سے لوٹے گئے 1 ارب روپے حاصل کر لیے

لاہور (شاکر محمود اعوان) پنجاب حکومت کی بنائی گئی 56 کمپنیوں میں لٹ مار کی جانے والی رقوم واپس قومی خزانے میں جمع ہونا شروع، نیب نے پنجاب کے 1 بیورو کریٹ سے 1 ارب وصول کر لیا ہے۔ موصوف نے پنجاب پاور کمپنی میں 23 کروڑ 27 لاکھ 86 ہزار روپے، ایرا میں 20 کروڑ 83لاکھ 43 ہزار روپے اورپی ایچ اے میں 3 کروڑ 72 لاکھ 50 ہزارروپے کی کرپشن کی۔

تفصیلات کے مطابق پنجاب کے خزانہ کو خالی کرنے والوں کے خلاف مکافات عمل کا آغاز ہوگیا ہے۔ نیب لاہور نے پنجاب حکومت کے کرپٹ افسر اکرام نوید سے پلی بارگین کر کے 1 ارب روپے قومی خزانے میں واپس جمع کرا دیئے ہیں۔

نیب دستاویزات کے مطابق اکرام نوید نے اپنی سروس کے دوران پنجاب پاور کمپنی، ایرا اور پی ایچ اے میں 97کروڑ 75 لاکھ80 ہزارروپے کی کرپشن کی۔

نیب دستاویزات  کے مطابق اکرام نوید نے شہباز شریف کے داماد علی عمران یوسف کو 13 کروڑ 19 لاکھ 37 ہزارروپے حکومتی خزانے سے دیئے۔ واقع 122 کنال زرعی زمین جسکی مالیت  20 کروڑ 50 لاکھ روپے، لاہور کینٹ میں 106 کنال کی زرعی زمین جس کی مارکیٹ ویلیو 18 کروڑ 50 لاکھ ہے پنجاب حکومت کے خزانے میں جمع کرائی گئی ہے۔

ماڈل ٹاون میں 11 کنال کی رہائشی زمین ،غالب مارکیٹ لاہور میں واقع لگژری اپارٹمنٹ، لبرٹی لاہور میں موجود 6 قیمتی اپارٹمنٹس ،حفیظ سنٹر گلبرگ میں موجود 2  دکانیں،مری میں موجود 1 کروڑ کی پراپرٹی بھی حکومت پنجاب کے حوالے کر دی  گئی۔

اکرام نوید نے 40 سے زائد جائیدادیں بیٹے فجر اکرام، احسن اکرام اور بیوی سمینہ اکرام کے نام کر رکھی تھیں جن کی مالیت اربوں روپے ہے۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں