مالم جبہ کیس میں وزیر اعلیٰ کے پی کو کلین چٹ نہیں دی گئی: نیب

اسلام آباد (پبلک نیوز) قومی احتساب بیورو نے وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کو مالم جبہ اراضی کیس میں کسی قسم کی کوئی کلین چٹ نہیں دی۔ نیب نے میڈیا میں آنے والے بیانات کی تردید کر دی۔

تفصیلات کے مطابق قانون سب کے لیے برابر ہے۔ کسی کو بھی رعایت نہیں ملے گی۔ قومی احتساب بیورو نے وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کی طرف سے میڈیا میں دیئے جانے والے بیانات کی تردید کر دی ہے۔

گزشتہ روز وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان مالم جبہ اراضی کیس میں نیب  میں پیشی کے بعد وزیراعلیٰ سے صحافی نے سوال کیا کہ آپ کو کوئی سوالنامہ دیا گیا یا یہ آپ کی یہ پہلی اور آخری پیشی ہوگی؟ جس پر انہوں نے کہا تھا جی بالکل یہ آخری پیشی ہے۔

وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا کے بیان کے بعد نیب کی جانب سے وضاحتی بیان جاری کیا گیا جس میں کہا گیا ہے کہ مالم جبہ اراضی کیس میں وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان کو کوئی کلین چٹ نہیں دی ہے۔ ان کو قانون کے مطابق دوبارہ کسی بھی وقت بلایا جا سکتا ہے۔

ترجمان نیب کے مطابق وزیراعلیٰ کے پی کا کمبائنڈ انویسٹی گیشن ٹیم کو بیان غیرتسلی بخش ہے جس کے بعد انہیں دوبارہ کسی بھی وقت بلایا جا سکتا ہے۔

واضح رہے کہ تحریک انصاف کی گزشتہ صوبائی حکومت نے مالم جبہ میں 275 ایکڑ سرکاری زمین 33 سال کی لیز پر ایک کمپنی کو دی تھی جس میں بے قاعدگیوں اور اقربا پروری کی شکایات سامنے آنے پر نیب خیبر پختونخوا نے تحقیقات شروع کر رکھی ہیں۔

احمد علی کیف  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں