نیب نے حمزہ شہباز کو غیر ملکی ترسیلات منتقل ہونے کی دستاویزات موصول کر لیں

لاہور(شاکر محمود اعوان) حمزہ شہباز کے سر پر گرفتاری کی تلوار لٹک گئی۔ نیب لاہور نے حمزہ شہباز غیر ملکی ترسیلات منتقل ہونے کی دستاویزات حاصل کر لیں۔ دستاویزات کے مطابق حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کو برطانیہ سے 53 ٹرانزیکشن میں کروڑوں روپے منتقل ہوئے۔

 

اپوزیشن لیڈر پنجاب حمزہ شہباز اور ان کے بھائی سلمان شہباز دیکھتے ہی دیکھتے کیسے اربوں روپے مالیت کے اثاثوں کے مالک بنے۔ نیب نے کھوج لگا لیا ہے۔ نیب نے حمزہ شہباز، سلمان شہباز، نصرت شہباز سمیت فیملی کے دیگر آرکین کو بیرون ملک سے بھیجی گئی ترسیلات تفصیلات حاصل کر لیں ہیں۔ نیب کو موصول دستاویزات کے مطابق حمزہ شہباز اور سلمان شہباز کو برطانیہ سے 53 ٹرانزیکشن کے زریعے 39 کروڑ 34،لاکھ 97 ہزار 191 روپے منتقل ہوئے۔

 

24 ٹرانزیکشن کے ذریعے 18 کرور 47 لاکھ 2 ہزار 317 روپے عثمان انٹرنیشنل نی ایکسچینج جبکہ مزید 29 ٹرانزیکشن کے ذریعے 20 کروڑ 87 لاکھ 94 ہزار 874 روپے کریم منی ایکسچینج، آر ایم گوبل، کروس بار، والٹر ایکس کے ذریعے کی گئیں۔ حمزہ شہباز، سلمان شہباز سمیت فیملی کے دیگر ارکین کے اکاؤنٹ میں 2000 سے 2008 مین منتقل ہوئیں۔ شریف فیملی کو برطانیہ سے ترسیلات منتقل کرنے میں عدنان بٹ، شاہد رفیق، عبدالقیوم سہولت کار تھے جبکہ برطانیہ میں رقوم پہلی بے نامی دار کمپنیوں میں پھر شریف فیملی کے اکاونٹ میں منتقل ہوئیں۔

عطاء سبحانی  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں