جعلی بینک اکاؤنٹس کیس: نیب نے پیش رفت رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرا دی

اسلام اباد(پبلک نیوز) جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں پیش رفت رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع، جبکہ نیب کی کمبائنڈ انویسٹی گیشن ٹیمز مزید تحقیقات کے لئے کراچی پہنچ گئیں ہیں، چار ٹیمز کی سربراہی ڈی جی عرفان منگی کر رہے ہیں۔

 

جعلی بینک اکاؤنٹس کیس میں نیب نے پیش رفت رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرادی ہے۔ ڈی جی نیب راولپنڈی عرفان منگی کی تیار کردہ سربمہر رپورٹ عدالت میں جمع کرائی گئی۔ تین فروری کو رپورٹ نیب ہیڈ کوارٹرز کو موصول ہوئی تھی۔ نیب ذرائع نے بتایا تھا کہ رپورٹ کے مطابق مقدمات کی جانچ پڑتال میرٹ پر کی جا رہی ہے۔ رپورٹ کے مطابق جے آئی ٹی حکام سے نیب نے بریفنگ لی اور اب مقدمات کے لئے مزید شواہد اکٹھے کئے جا رہے ہیں۔

 

ذرائع کا کہنا ہے کہ متعلقہ محکموں سے مزید ریکارڈ بھی طلب کیا گیا ہے، سپریم کورٹ نے نیب کو ہر پندرہ روز بعد رپورٹ جمع کرانے کا حکم دے رکھا ہے۔ دوسری طرف جعلی اکاؤنٹس کیس، نیب کی کمبائنڈ انویسٹی گیشن ٹیمیں تشکیل دے دی گئی۔ ٹیمیں تحقیقات کے لئے کراچی پہنچ گئی ہیں۔ نیب راولپنڈی سے محمد یونس خان اور محمد گل آفریدی سی آئی ٹی کی سربراہی کر رہے ہیں، جبکہ ڈپٹی ڈائریکٹر محبوب عالم اور محسن علی بھی اپنی اپنی متعلقہ ٹیم کو لیڈ کر رہے ہیں۔ چاروں ٹیمیں ایف بی آر، ایکسائز، سٹیٹ بنک سے ریکارڈ اکٹھا کریں گی۔

 

ذرائع کا کہنا ہے کہ انور مجید کی تمام ملز کے حوالے سے بھی ریکارڈ حاصل کیا جائے گا۔ ریکارڈ کے بعد طلبی کے نوٹس جاری کئے جائیں گے۔ 1.32ارب روپے کِک بیکس کی رقم جعلی اکاؤنٹس میں منتقلی پر سرکاری افسروں سے بھی پوچھ گچھ ہو گی۔ تمام ٹیمز ڈی جی عرفان منگی کو تمام تحقیقات سے آگاہ رکھیں گی۔

عطاء سبحانی  6 ماه پہلے

متعلقہ خبریں