نیب قوانین میں ترمیم، قومی احتساب بیورو نے دفاع کا فیصلہ کر لیا

اسلام آباد(پبلک نیوز) اپوزیشن نیب قوانین میں ترمیم کے لئے سرگرم، نیب نے بھی بھرپور دفاع کا فیصلہ کر لیا۔ نیب نے معاملہ سپریم کورٹ میں لے جانے کے لئے مشاورت طلب کر لی۔

 

نیب قوانین میں ترمیم کے معاملہ پر قومی احتساب بیورو نے دفاع کا فیصلہ کرلیا۔ نیب نے اس معاملے کو سپریم کورٹ لے جانے کے لئے قانونی مشاورت مانگ لی۔ نیب ذرائع کے مطابق قانونی مشاورت مکمل کرکے چیئرمین نیب جسٹس ریٹائر جاوید اقبال کی منظوری سے سپریم کورٹ میں پٹیشن دائر کی جائے گی۔

 

نیب ذرائع کے مطابق موجودہ نیب قوانین میں ترمیمِ انصاف کا قتل ہو گا۔ نیب کے ذرائع کا کہنا ہے کہ اس وقت نیب قوانین میں ترمیم سے زیادہ  پولیس میں اصلاحات ضروری ہیں، جس سے ہر عام و خاص کو شکایت ہے۔ نیب کرپٹ اور بدعنوان عناصر کے خلاف بلاتفریق اور قانون کے مطابق کارروائی کرتا ہے۔

 

حکومت اور حزب اختلاف کی جماعتیں مل کر نیب قوانین میں ترامیم لانے کے لئے سرگرم ہیں ۔ نیب قوانین میں  مجوزہ ترامیم  میں جسمانی ریمانڈ کی مدت نوے سے کم کرکے چودہ دن کرنا، کسی رکن پارلیمنٹ کی گرفتاری کے لئے پارلیمانی کمیشن کی منظوری اور نیب مقدمات کے لئے ٹائم فریم طے کرناشامل ہے۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں