بجلی کی قیمتوں میں 1 روپے 66 پیسے اضافہ

 

پبلک نیوز: بجلی ایک روپے 66 پیسے فی یونٹ منہگی کر دی گئی ہے۔ منظوری اگست کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کے تحت دی گئی ہے۔ صارفین پر 22 ارب 60 کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا۔

 

تفصیلات کے مطابق نیپرا نے بھی ایک بار پھر عوام پر بجلی گرا دی۔ نیپرا نے بجلی ایک روپے 66 پیسے فی یونٹ منہگی کرنے کی منظوری دے دی۔ بجلی مہنگی کرنے کی منظوری اگست کی فیول پرائس ایڈجسٹمنٹ کے تحت دی گئی۔ بجلی کی قیمت بڑھنے سے صارفین پر 22 ارب 60 کروڑ روپے کا اضافی بوجھ پڑے گا۔

سینٹرل پاور پرچیزنگ کمپنی (سی پی پی اے) کے مطابق اگست میں پانی سے 40.33 فیصد اور کوئلے سے 13.34 فیصد بجلی پیدا کی گئی۔ مقامی گیس سے 11.87 فیصد اور درآمدی ایل این جی سے 22.89 فیصد بجلی پیدا کی گئی۔ فرنس آئل سے 3.60 فیصد اور ایٹمی ذرائع سے 4.66 فیصد بجلی پیدا کی گئی ہے۔

 

نیپرا کے مطابق گیس اور ایل این جی نیپرا کی ریفرنس قیمت سے زیادہ ہیں۔ کوئلے کے بہتر صلاحیت والے پلانٹس چلائے جاتے تو 3.4 ارب روپے کی بچت کی جا سکتی تھی۔

احمد علی کیف  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں