نگراں حکومت کارکنوں کو بلاجواز گرفتار کر کے اشتعال دلا رہی ہے: خواجہ سعد رفیق

لاہور(پبلک نیوز) لاہور میں لیگی کارکنوں کی گرفتاری کے بعد مسلم لیگ ن کے رہنماؤں کی رات گئے ہنگامی پریس کانفرنس، خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ شہباز شریف کی قیادت میں 13جولائی کو نواز شریف کا تاریخی استقبال کریں گے، پتہ نہیں نگران وزیراعلٰی پنجاب کو گرفتاریوں کا مشورہ کس نے دیا ہے؟ لیگی رہنماؤں نے کارکنوں کو فوری رہا کرنے کا مطالبہ بھی کر دیا۔

 مسلم لیگ ن کے رہنماؤں نے کارکنوں کی گرفتاری کے بعد ماڈل ٹاؤن مرکزی سیکریٹریٹ میں ہنگامی پریس کانفرنس کی، سابق وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے کہا کہ کارکنوں کو گرفتار کرکے کوٹ لکھپت جیل بھیجا جا رہا ہے۔ نگراں حکومت کارکنوں کو بلاجواز گرفتار کرکے اشتعال دلا رہی ہے۔

سردار ایاز صادق اور پرویز ملک نے کہا کہ حکومت خود اشتعال انگیز کارروائیاں کر رہی ہے۔ لیگی رہنماؤں نے کہا کہ آزادی رائے کا حق سب کو حاصل ہے، پاکستان میں عام انتخابات ہو رہے ہیں، کوئی نہیں چاہتا کہ بگاڑ پیدا ہو، مسلم لیگ ن انتخابات کا بائیکاٹ کرے گی اور نہ ہی الیکشن کو متنازع بنائیں گے۔ سردار ایاز صادق نے نگران وزیر اعلٰی کو وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ تاریخ ان کو کبھی معاف نہیں کرے گی۔ لیگی رہنماؤں کا کہنا تھا کہ گرفتاریوں کا سلسلہ بند کیا جائے، اگر کسی میں ہمت ہے تو انہیں گرفتار کر کے دکھایا جائے۔

1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں