ایف بی آر کا مریم نواز کو ٹیکس ریکوری کا نوٹس، مریم نواز نے نوٹس لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیا

لاہور (پبلک نیوز) مریم نواز شریف ایف بی آر کی نادہندہ نکلیں، ایف بی آر نے مریم نواز کو ٹیکس ریکوری کے نوٹس بھجوا دیے، مریم نواز کو 31 کروڑ 86 لاکھ روپے کے اثاثوں پر نوٹس بھجوائے گئے۔

 

تفصیلات کے مطابق مریم نواز شریف فیڈرل بورڈ آف ریوینیو (ایف بی آر) کی نادہندہ نکلیں، ایف بی آر نے مریم نواز کو ٹیکس ریکوری کے نوٹس بھجوا دیے، مریم نواز کو 31 کروڑ 86 لاکھ روپے کے اثاثوں پر نوٹس بھجوائے گئے۔

مریم نواز نے 24 اپریل کو ٹیکس ریکوری کے بھجوائے گئے نوٹس ریکوری کے نوٹس لاہور ہائی کورٹ میں چیلنج کر دیے۔ مریم نواز کی جانب سے ایف بی آر کے نوٹس کالعدم قرار دینے کی استدعا کی گئی ہے۔ وکیل مریم نواز نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ مریم نواز ایک رجسٹرڈ ٹیکس پیئر ہے اور فقہ کے مطابق زکوٰۃ بھی ادا کرتی ہیں۔ درخواست گزار نے ہمیشہ قانونی طور پر ٹیکس ادا کیا اور کبھی ڈیفالٹ نہیں کیا۔

 

وکیل مریم نواز نے مؤقف اختیار کیا ہے کہ ٹیکس عوامی مقاصد کے لیے حکومت کی جانب سے وصول کی جانے والی رقم ہے۔ انکم ٹیکس لیوی سپورٹ ایکٹ 2013 آرٹیکل 73 کے سیکشن 2 اے سے متصادم ہے۔ 18ویں آئینی ترمیم کے تحت سوشل ویلفیئر صوبائی معاملہ ہے۔ وکیل مریم نواز نے استدعا کی ہے کہ ان لینڈ ریونیو ایف بی آر کی جانب سے انکم سپورٹ لیوی کی وصولی کالعدم قرار دی جائے۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں