پاکستان ہاکی ٹیم پرو لیگ سے باہر، اولمپک 2020 میں شرکت مشکوک

اسلام آباد (فیصل ساہی) قومی کھیل ہاکی زوال کا شکار۔ ہاکی کے میدان بھی تباہی کے دہانے پر۔ انتظامیہ کی ترجیح اور نیت بدحال ہاکی گراؤنڈز سے واضح ہے۔ وفاقی دارالحکومت میں کھیل سے کھلواڑ ہو رہا ہے تو دور دراز علاقوں کا کیا حال ہوگا۔

تفصیلات کے مطابق اولمپک 2020 میں قومی ہاکی ٹیم کی شرکت مشکوک ہو گئی۔ قومی ٹیم پرو لیگ سے بھی باہر ہو چکی ہے۔ ڈومیسٹک مقابلے نہ ہونے کے برابر ہیں۔ ہاکی فیڈریشن کی آپسی لڑائیاں بھی بہت بڑا مسئلہ بنی ہوئی ہیں۔ ایسی صورتحال میں میدان کھنڈر نہیں بنیں گے تو کیا ہو گا۔

اسلام آباد کے نصیر بندا ہاکی اسٹیڈیم کا تو جیسے کوئی والی وارث ہی نہ رہا۔ اسٹیڈیم کی ٹرف مٹی اورغلاظت سے بھر چکی ہے۔ انتظامیہ خواب غفلت سےجاگنی تھی نہ جاگی۔

وفاقی وزیر بین الصوبائی رابطہ ڈاکٹر فہمیدہ مرزا نے سپورٹس کمپلیکس کا اچانک دورہ کیا تو ملازمین نے کمال چالاکی سے وفاقی وزیر کو نصیر بندا ہاکی اسٹیڈیم سے دور رکھا۔

ہاکی گراؤنڈ میں پول، باؤنڈری اور واٹرگنز سمیت کوئی چیزسلامت نہیں۔ ٹرف کو پانی دینا تو دور کی بات، گراؤنڈ میں پینے کا صاف پانی بھی دستیاب نہیں۔

کسی بھی کھیل کو فروغ دینے کے لیے میدانوں کی ضرورت ہوتی ہے۔ لیکن پاکستان ہاکی فیڈریشن قومی کھیل کا کھویا ہوا مقام بحال کیسے کرے گی جب میدانوں کی یہ صورتحال ہے۔

احمد علی کیف  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں