پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں تاریخی مندی، سونا بھی 1750 روپے مہنگا

 

پبلک نیوز: پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں تاریخی مندی دیکھنے میں آئی۔ 100 انڈیکس 31 ہزار کی نفیساتی حد سے بھی نیچے آ گیا۔ 723 پوائنٹس کمی سے 100 انڈیکس 30 ہزار 277 پر بند ہوا۔ فی تولہ سونا بھی 1750 روپے مہنگا ہو کر تاریخ کی بلند ترین سطح 86 ہزار 250  پر پہنچ گیا۔

 

تفصیلات کے مطابق کاروباری ہفتے کے تیسرے روز پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں شدید مندی رہی۔ 100 انڈیکس 31 ہزار کی نفسیاتی حد بھی گنوا بیٹھا۔ 723 پوائنٹس کی کمی سے مارکیٹ 30 ہزار 277 کی سطح پر بند ہوئی۔ اسٹاک ایکسچینچ میں 3 سال 4 ماہ کی یہ کم ترین سطح ہے۔ دن بھر مجموعی طور پر 284 کمپنیز کے شیئرز میں کاروبار ہوا۔ 204 کمپنیز کے شیئرز کی قیمتوں میں کمی اور صرف 61 کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔

 

204 کمپنیز کے شیئرز کی قیمتوں میں کمی اور صرف 61 کی قیمتوں میں اضافہ ریکارڈ کیا گیا۔ شیئرز کی قیمت گرنے سے سرمایہ کاروں کے 125 ارب روپے ڈوب گئے۔ کرنسی مارکیٹ میں ڈالر کی قدر میں کمی کا سلسلہ جاری ہے۔ انٹر بینک میں ڈالر 40 پیسے کم ہو کر 158 روپے 25 پیسے بند ہوا۔ اوپن مارکیٹ میں 20 پیسے کمی کے بعد ڈالر 158 روپے 60 پیسے کا ہو گیا۔

 

صرافہ مارکیٹ میں  سونا مزید مہنگا ہو کر تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا۔ فی تولہ سونا 1750 روپے مہنگا ہو کر 86 ہزار 250 روپے کا ہو گیا۔ دس گرام سونا 1500  روپے مہنگا ہو کر 73945  روپے کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا۔ عالمی مارکیٹ میں فی اونس سونا 32 ڈالر مہنگا ہو کر 1495 ڈالر کا ہو گیا۔

 

احمد علی کیف  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں