دبئی ٹیسٹ: آسٹریلیا کیخلاف پاکستان نے پہلے روز 3وکٹوں پر 255 رنز بنالیے

دبئی(پبلک نیوز) آسٹریلیا کے خلاف پہلے ٹیسٹ میچ میں پاکستان ٹیم کی بیٹنگ جاری ہے۔ پاکستانی اوپنرز کی شاندار 205 رنز کی پارٹنرشپ، حفیظ 126، امام الحق 76رنز بنا کر آؤٹ۔

 

قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد نے ٹاس جیتنے کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔ کپتان سرفراز احمد کا کہنا تھا کہ بیٹنگ کیلئے پچ سازگار دکھائی دے رہی ہے، آسٹریلیا کے خلاف پہلے ٹیسٹ میں بلال آصف کو ٹیسٹ کیپ دی گئی ہے۔ بیٹنگ لائن اپ کی بیک بون اظہر علی بھی کارکردگی دکھانے کے لیے پُر عزم ہیں جن کا کہنا ہے کہ آسٹریلیا کو شکست دینی ہے تو لمبی پارٹنر شپ قائم کرنا پڑیں گی۔

پاکستان کی جانب سے اننگز کا آغاز محمد حفیظ اور امام الحق نے انتہائی پراعتماد انداز میں کیا، اوپنرز کا شاندار آغاز، محمد حفیظ 126رنز بنا کر پویلین واپس لوٹ گئے۔ اوپنر امام الحق 76رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ محمد حفیظ نے 15چوکوں کی مدد سے 208گیندوں پر 126رنز بنائے جبکہ امام الحق نے 2چھکوں اور 7چوکوں کی مدد سے 76رنز بنائے۔ اظہر علی 18 رنز بناکر ہولینڈ کی گیند پر آؤٹ ہوئے جب کہ قومی ٹیم پہلے روز میچ کے اختتام پر مجموعی طور پر 255 رنز بناسکی۔

واضع رہے کہ پاکستان اور آسٹریلیا کے مابین ہونے والے ٹیسٹ سیریز میں کون کس پر کتنا بھاری ہو گا وہ دونوں ٹیموں کے کھلاڑیوں کی کارکردگی سے پتہ چلے گا۔ اگر بات کی جائے پاکستانی اسکواڈ کی تو پاکستان بیٹنگ میں اوپنر اظہرعلی ، بابر اعظم اور اسد شفیق پر انحصار کریں گا۔ محمد حفیظ رائٹ ہینڈ باؤلر ہیں، جو کہ آسٹریلوی بلے بازوں کے لیے خطرہ ثابت ہو سکتے ہیں، آسٹریلیا کے بیٹسمین لیفٹ ہینڈڈ ہیں اور محمد حفیظ کو فیس کرنے میں انکو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا، اب تک محمد حفیظ 50 ٹیسٹ میچوں میں 3452 رنز بنا چکے ہیں اور 52 وکٹیں بھی لے رکھی ہیں۔

 

اسپن باؤلنگ کے شعبہ میں انتہائی تجربہ کار یاسر شاہ کو اپنے جوہر دکھانے ہوں گے، جو کہ آسٹریلیا کے خلاف 12 وکٹوں کے ساتھ کامیاب باؤلر رہے ہیں۔ اظہر علی کی آسٹریلیا کے خلاف 2 سنچریوں کے ساتھ ٹاپ اسکورر رہے ہیں اور اظہر علی 65 ٹیسٹ میچوں کا تجربہ رکھتے ہیں، جس میں انہوں نے 5202 رنز اسکور کیے،جبکہ اسد شفیق 61 ٹیسٹ میچ کھیل چکے ہیں جن میں انہوں نے 3768 رنز بنائے، اب بات کرتے ہیں قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان سرفراز احمدکی، قومی ٹیم کے کپتان کی بھی گزشتہ کچھ میچوں میں کوئی خاص کارکردگی دیکھنے کو نہیں ملی، لیکن ان کو ایک شاندار واپسی کرنی ہو گی۔

 

ایرون فنچ، مچل مارش اور شان مارش آسٹریلوی امیدوں کے محور ہوں گے، بیٹنگ میں مچل مارش پاکستان کے خلاف کامیاب بلے باز رہے ہیں، اگر بات کریں مچل سٹارک کی تو وہ 43 ٹیسٹ میچز میں میں 182 وکٹیں حاصل کرنے والے کھلاڑی ہیں، اگر بوب ہولینڈ کی بات کریں تو انہوں نے 11 ٹیسٹ میچز میں 34 وکٹیں حاصل کر رکھی ہیں، جبکہ پیٹر سیڈل نے 62 ٹیسٹ میچز میں 1063 اسکور بنائے اور 211 وکٹیں حاصل کیں۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں