مریضوں کی شکایات، وزیراعظم کا ہسپتالوں کی انتظامیہ پر سخت اظہارِ برہمی

اسلام آباد(پبلک نیوز) وزیر اعظم عمران خان سرکاری ہسپتالوں کی انتظامیہ پر سخت ناراض، مریضوں کو ادویات نہ ملنے اور نجی لیبز سے ٹیسٹ کروانے کی شکایات پر وفاقی وزیر صحت سے رپورٹ طلب کر لی گئی۔

 

وزیراعظم عمران خان کے راولپنڈی کے دو ہسپتالوں کے اچانک دورے کئے۔ مریضوں نے انتظامیہ کیخلاف شکایات کے ڈھیر لگا دئیے۔ وزیر اعظم عمران خان کے گزشتہ رات ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر اسپتال اورہولی فیملی اسپتال کے اچانک دوروں کے دوران مریض انتظامیہ کے خلاف پھٹ پڑے۔

 

مریضوں کی شکایات پر وزیراعظم عمران خان ہسپتالوں کی انتظامیہ پر سخت ناراض دکھائی دئیے۔ وزیر اعظم نے ادویات کی قلت، لیبارٹری ٹیسٹ باہر سے کرانے کی مریضوں کی شکایت کا نوٹس لیا اور راولپنڈی کے سرکاری اسپتالوں میں ادویات کی عدم فراہمی اور ٹیسٹ باہر سےکروانے کی وضاحت طلب کرلی۔

متلقہ خبر:راولپنڈی: وزیر اعظم کے ڈی ایچ کیو ، راجہ بازار پناہ گاہ، ہولی فیملی ہسپتال کے اچانک دورے

وزیراعظم نے ہسپتالوں کی انتظامیہ کو عوامی شکایات پر شو کاز، یا وارننگ لیٹر جاری کرنے کی بھی ہدایت کی، وزیراعظم نے وفاقی وزیر صحت عامر کیانی سے الگ رپورٹ بھی طلب کی ہے جس میں ان سے سامنے آنے والی شکایات پر وضاحت طلب کی گئی ہے۔

 

وزیراعظم عمران خان نے ہدایت کی ہے کہ سرکاری اسپتالوں میں تمام ادویات اورلیبارٹری ٹیسٹ یقینی بنائے جائیں۔ وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ انہوں نے سرکاری اسپتالوں کو دکھی انسانوں کی خدمت کے مراکز بنانے کا تہیہ کرلیا ہے اور وہ مریضوں کو تمام سہولتوں کی فراہمی تک بار بار دورے کرتے رہیں گے۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں