پاکستان کسی مسلح گروپ کو اپنی سرزمین پر کام نہیں کرنے دے گا، وزیراعظم

اسلام آباد (پبلک نیوز) وزیر اعظم عمران خان نے کہا ہے کہ پاکستان کسی مسلح گروپ کو اپنی سرزمین پر کام نہیں کرنے دے گا۔ حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عملدآمد میں تمام رکاوٹیں دور کرے گی۔ وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت داخلی سیکیورٹی سے متعلق اعلیٰ سطح اجلاس کا اعلامیہ جاری کر دیا گیا۔

وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت قومی داخلی سلامتی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں وفاقی، صوبائی وزرا، ڈی جی آئی ایس آئی، ڈی جی آئی بی اور وفاقی سیکرٹریوں سمیت اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔

اجلاس میں ملکی داخلی سکیورٹی کا جائزہ لیا گیا جب کہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد اور کالعدم تنظیموں کے خلاف جاری کریک ڈاؤن پر بریفنگ دی گئی اور نیشنل ایکشن پلان کے تحت اب تک ہونے والی کارروائیوں کا بھی جائزہ لیا گیا۔

فنانشل ایکشن ٹاسک فورس کی سفارشات پر تبادلہ خیال کیا گیا جب کہ مدارس میں اصلاحات کے حوالےسے بھی غور کیا گیا۔

عمران خان نے کہا کہ نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ حکومت نیشنل ایکشن پلان پر عملدرآمد میں حائل رکاوٹوں کو دور کرنے کے لیے پرعزم ہے۔ نیشنل ایکشن پلان پوری قوم کی امنگوں کی ترجمانی اور تمام سیاسی جماعتوں کا متفقہ پلان ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ دہشت گردی سے پاکستان نے انسانی جانوں اور املاک کانقصان برداشت کیا۔ پاکستان کسی مسلح گروپ کو اپنی سرزمین پر کام نہیں کرنے دے گا۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں