نواز شریف کی ن لیگ کو آل پارٹیز کانفرنس میں شرکت کی اجازت

لاہور (پبلک نیوز) سابق وزیر اعظم نواز شریف سے کوٹ لکھپت جیل میں پارٹی رہنماؤں سے ملاقات کی اندرونی کہانی منظر عام پر آ گئی۔ پاکستان مسلم لیگ ن کے تاحیات قائد نے پنجاب میں پارٹی کو نچلی سطح تک فعال کرنے ہدایت کر دی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نواز شریف نے صوبائی صدر مسلم لیگ ن پنجاب رانا ثناء اللہ کو ٹاسک سونپ دیا۔ انھوں نے ہدایت کی ہے کہ پنجاب میں پارٹی کی تنظیم سازی کا عمل جلد از جلد مکمل کیا جائے۔ پارٹی سے وابستہ مخلص اور محنتی رہنماؤں اور کارکنان کو عہدے دیئے جائیں۔ ضلع، تحصیل اور یونین کونسل کی سطح تک پارٹی کے خالی عہدوں پر محنتی کارکنوں کی تعیناتیاں کی جائیں۔

نواز شریف نے ہدایت کی کہ میرٹ پر عہدے دیئے جائیں، عہدہ دیتے وقت میرے سمیت کسی کی بھی سفارش نہ مانیں۔ تنظیم سازی مکمل کرتے وقت لوٹوں کو کسی صورت تعینات نہ کیا جائے۔

سابق وزیر اعظم نے پارٹی کو 28 مئی کو یوم تکبیر بھرپور طریقہ سے منانے کی بھی ہدایت کر دی۔ نواز شریف نے اسلام آباد اور بہاولپور کے دوروں کے دوران مریم نواز کی کارکردگی کو سراہا۔ انھوں نے مریم نواز کو ملک کے مزید اضلاع کے دورے کرنے کی ہدایت بھی کی۔

پارٹی قیادت نے 19 مئی کے بلاول بھٹو کے مشترکہ گرینڈ افطار ڈنر کی رپورٹ پیش کی۔ شاہد خاقان عباسی نے اسلام آباد میں 20 مئی کو ہونے والے پارٹی اجلاس کی کارروائی اور رہنماؤں کی تجاویز سے بھی نواز شریف کو آگاہ کیا۔

نواز شریف نے پارٹی رہنماؤں کی تجاویز پر عید کے بعد آل پارٹیز کانفرنس میں مسلم لیگ ن کی شرکت کی اجازت دے دی۔ نواز شریف نے منظوری دے دی کہ اے پی سی میں اتحادی جماعتوں کی مشترکہ قیادت جو بھی فیصلہ کرے، اس پر عمل کیا جائے۔

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں