پولو گراؤنڈ شندور:3 روزہ پولو میلہ2018ء کا افتتاح کر دیا گیا

چترال(پبلک نیوز) دنیا کے بلند ترین پولو گراؤنڈ شندور میں تین روزہ میلہ کا افتتاح ہوا جس میں گلگت اور چترال کے روایتی حریف پولو ٹیموں کے درمیان پولو میچ کھیلے جا رہے ہیں۔ پہلے دن تین میچ ہوئے۔ جس میں پہلا میچ گلگت کے پھنڈر پولو ٹیم اور چترال کے لاسپور پولو ٹیموں کے درمیان کھیلا گیا۔

پبک نیوز کے مطابق پہلے ہاف میں چترال ٹیم نے تین گول بنائے جبکہ پھنڈر گلگت کا ٹیم کوئی گول نہ بنا سکا۔ دوسرے ہاف میں لاسپور چترال کے ٹیم نے پانچ گول پورے کئے جبکہ پھنڈر کے ٹیم نے صرف ایک گول کیا اور یوں لاسپور پولو ٹیم نے ایک کے مقابلے میں پانچ گولوں سے پھنڈر (گلگت) کے ٹیم کو شکست دیگر فاتح قرار دیے۔

ابتدائی میچ کے موقع پر خیبر پحتون خواہ کے نگران وزیر اعلیٰ جسٹس ریٹائرڈ دوست محمد خان مہمان حصوصی تھے۔ جبکہ ان کے ہمراہ صوبائی وزیر سیاحت محمد رشید درماخیل، وزیر خزانہ حاجی فضل الہی، گلگت بلتستان کے وزیر کھیل و سیاحت، کمشنر ملاکنڈ ڈویژن سید ظہیر الاسلام، سیکرٹری ٹورزم کارپوریشن خیبر پحتون خواہ طارق خان، منیجنگ ڈائریکٹر مشتاق احمد، کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل معین الدین، ڈپٹی کمشنر چترال وغیرہ بھی موجود تھے۔ اس موقع ایف سی پی ایس سکول کے طلبہ اور طالبات نے قومی نغمے پیش کئے جن کیلئے وزیراعلیٰ دوست محمد خان نے پہلے جیتنے والے ٹیم کیلئے دس لاکھ روپے، دوسرے جیتنے والے ٹیم کیلئے سات لاکھ روپے اور تیسرے جیتنے والے ٹیم کیلئے پانچ لاکھ روپے نقد انعام کا اعلان بھی کیا۔۔ چترال سکاؤٹس کے بینڈ پارٹی نے خوبصورت انداز میں اپنا پیش کیا۔ پولو میچ کے ساتھ ساتھ پیرا گلائڈنگ اور ہینڈ پیرا گلایڈنگ کا بھی مظاہرہ کیا گیا جنہوں نے حاضرین کی داد لی۔

تین روزہ جشن شندور کے پہلے دن دوسرا میچ سب ڈویژن مستوج (چترال) کے پولو ٹیم اور سب ڈویژن یاسین (گلگت) کے پولو ٹیموں کے درمیان کھیلا گیا اس موقع پر گلگت بلتستان کے وزیر سیاحت مہمان حصوصی تھے۔ اس میچ میں مستوج کے ٹیم نے پانچ کے مقابلے میں آٹھ گولوں سے یاسین ٹیم کو شکست دیکر فاتح قرار پایا۔تیسرا میچ چترال ڈی اور گلگت ڈی ٹیموں کے درمیان کھیلا گیا اس موقع پر کمانڈنٹ چترال سکاؤٹس کرنل معین الدین مہمان حصوصی تھے اس میچ میں بھی چترال ٹیم نے دو کے مقابلے میں چھ گولوں سے گلگت پولو ٹیم کو شکست دی۔

وزیراعلیٰ دوست محمد خان نے کھلاڑیوں میں انعامات، کپ اور ٹرافی تقسیم کئے۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ چترال بہت خوبصورت علاقہ ہے جو نہایت پر امن ہے اور قدرت نے اس حطے کو بہت حسن دیا ہے تاہم اس کی سڑکوں کی مرمت کیلئے ضرور سنجیدگی سے کام کیا جائے گا۔

جرمنی کے سفیر مارٹن کوبلر اور امریکی خاتون فرسٹ سیکرٹری ڈیویلپمنٹ مارین پیفنیگس اور دیگر غیرملکی سیاحوں نے بھی شندور کے مقام پر پولو میچ دیکھا اور اپنی خوشی کا اظہار کیا ۔ہمارے نمائندے سے باتیں کرتے ہوئے دونوں ڈپلومیٹ نے کہا کہ چترا ل اور شندور کا ان کا پہلا دورہ ہے اور یہاں آکر ان کی خوشی کی انتہاء نہ رہی کہ اتنا خوبصورت اور پرامن علاقہ ہے۔ انہوں نے دنیا بھر کے سیاحوں کو دعوت دی کہ وہ ضرور چترال آئے اور یہاں کے پر امن ماحول اور خوبصورت نظاروں سے لطف اندوز ہو۔

شندور میلہ کے دوسرے دن بھی تین میچ ہوں گے جن کی ترتیب اس طرح ہے۔ پہلا میچ چترال سی اور گلگت سی پولو ٹیموں کے درمیان، دوسرا میچ چترال بی اور گلگت بی ٹیموں کے درمیان اور تیسرا میچ چترال آفیسرز پولو ٹیم اور گلگت آفیسرز پولو ٹیموں کے درمیاں کھیلا جائے گا۔

2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں