"ساہیوال واقعہ کے متاثرہ خاندن سے صدر مملکت نہ چئیرمین سینیٹ نے ملاقات کرنی تھی"

اسلام آباد (پبلک نیوز) ساہیوال واقعہ کے متاثرہ خاندن سے صدر مملکت نے ملاقات کرنی تھی نہ چئیرمین سینیٹ نے۔ ایوان صدر اور سینیٹ کے ترجمان نے واضح بیان جاری کردیا۔ ملاقات کی زیر گردش خبروں کی تردید ہو گئی۔ لیکن ساہیوال واقعہ کے متاثرہ خاندان کو اسلام آباد لایا کون؟ پنجاب حکومت سے وضاحت طلب کر لی گئی۔

تفصیلات کے مطابق ایوان صدر سے تردید آگئی۔ ساہیوال واقعہ کے متاثرہ خاندان کے افراد سے صدر مملکت کی کوئی ملاقات طے نہیں۔ تردید کے ساتھ ایوان صدر نے پنجاب حکومت سے کہا ہے کہ تحقیقات کی جائیں کہ کس نے متاثرہ خاندانوں کو اسلام آباد بلایا۔ 

سینیٹ سے بھی ایسی ہی تردید جاری کر دی گئی۔ خبر تھی کہ متاثرہ خاندان کو چیئرمین سینیٹ نے بلایا لیکن ملاقات نہیں کی گئی۔ سینیٹ نے خبر کی تردید کرتے ہوئے وضاحتی بیان میں کہا ہے کہ چیئرمین سینٹ محمد صادق سنجرانی کی جانب سے متاثرہ خاندان کو بلایا گیا تھا نہ ہی اس خاندان کی جانب سے مالاقات کے لیے کوئی پییغام ملا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق پولیس کا ڈی ایس پی متاثرہ خاندان کو اسلام آباد لایا۔ سینیٹ ترجمان نے کہا ہے کہ حکومت پنجاب سے اس معاملہ کی وضاحت لی جائے گی۔ اگر متاثرہ خاندان کو اس سلسلہ میں کوئی تکلیف ہوئی ہے تو ان سے معذرت کی جاتی ہے۔

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں