رمضان المبارک سے قبل عوام کو بڑا جھٹکا، حکومت نے پٹرول بم گرا دیا

اسلام آباد(پبلک نیوز) رمضان سے قبل مہنگائی کا طوفان آنے کو تیار ہے، وفاقی کابینہ کے فیصلے کا انتظار بھی نہ کیا گیا۔ آج سے پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ہو گیا۔ مہنگائی کے مارے عوام کو اب پٹرول 108روپے31 پیسے فی لٹر ملے گا۔

 

رمضان المبارک سے قبل عوام کو بڑا جھٹکا، حکومت نے پٹرول بم گرا دیا۔ ریونیو اکھٹا کرنے کی عجلت میں کابینہ کی منظوری سے پہلے ہی پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کر دیا گیا۔ 9 روپے 42 پیسے اضافہ کے بعد اب شہریوں کو ایک سو آٹھ روپے میں صرف ایک لٹر پٹرول ہی ملے گا۔ مٹی کے تیل کی نئی قیمت 96 روپے 77 پیسے ہو گئی۔ ہائی اسپیڈ ڈیزل کی قیمت 4 روپے 89 پیسے فی لٹر بڑھا دی گئی، جس کے بعد ڈیزل کی نئی قیمت 122 روپے 32 پیسے فی لٹر ہو گئی، لائٹ ڈیزل آئل کی قیمت 86 روپے94 پیسے فی لیٹر مقرر کی گئی ہے۔

 

پیٹرول پرجی ایس ٹی 2 فیصد سے بڑھا کر 12 فیصد کر دیا گیا، ہائی اسپیڈ اور لائٹ ڈیزل پر ٹیکس کی یکساں شرح بڑھا کر 17 فیصد کر دی، جبکہ مٹی کے تیل پر جی ایس ٹی 8 فیصد سے بڑھا 17 فیصد کر دیا گیا ہے۔ پٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں بڑھنے سے یقینی طور پر مہنگائی کا ایک نیا طوفان کھڑا ہو جائے گا، عوام کو رمضان سے قبل پیٹرول مہنگا نہ کرنے کی نوید سنائی گئی تھی، تاہم یہ فیصلہ چند روز بھی برقرار نہ رہ سکا۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں