وزیراعظم نے نیشنل ایکشن پلان کیلئے پارلیمانی کمیٹی بنانے کی ہدایت کر دی

اسلام آباد(پبلک نیوز) ایکشن پلان صرف دہشتگردی کے خلاف ہی نہیں، حکومت بنیادی عوامی مسائل کے خلاف بھی نیشنل ایکشن پلان بنائے گی، پارلیمانی کمیٹی سفارشات دے گی، اپوزیشن بھی حصہ ہو گی، اسپیکر قومی اسمبلی نے مشاورت کا آغاز کر دیا، سمند پار پاکستانی بھی تجاویز دے سکیں گے۔

 

صحت، تعلیم، پانی کی قلت، زراعت سمیت بنیادی عوامی مسائل کے حل کے لیے حکومت کا نیشنل ایکشن پلان بنانے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ ذرائع کے مطابق وزیراعظم نے نیشنل ایکشن پلان کے لیے پارلیمانی کمیٹی بنانے کی ہدایت کر دی۔ وزیراعظم عمران خان نے اسپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر کو پلان پر عمل درامد کا ٹاسک دے دیا۔

 

اسپیکر اپوزیشن جماعتوں کو اعتماد میں لیں گے۔ پارلیمانی کمیٹی برائے قومی ایکشن پلان میں تمام جماعتوں کو شامل کیا جائے گا۔ اسپیکر نے پارلیمانی جماعتوں سے روابط اور ملاقاتیں بھی شروع کر دیں۔ پارلیمانی کمیٹی پلان کے لئے اپنی سفارشات دے گی۔ کمیٹی کی رپورٹ پارلیمنٹ میں پیش ہو گی۔ سمندر پار پاکستانیوں سے بھی تجاویز لی جائیں گی۔

عطاء سبحانی  8 ماه پہلے

متعلقہ خبریں