اسی قوم سے ملک چلانے کیلئے پیسہ اکٹھا کر کے دکھاؤں گا: وزیراعظم

پشاور(پبلک نیوز) وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ شوکت خانم اسپتال میں75فیصدمریضوں کاعلاج مفت ہوتا ہے، دنیا میں واحد ہپستال ہے جو کنسر کا علاج مفت کرتا ہے۔ کسی ہسپتال کی نجکاری نہیں کر رہے۔ ہسپتالوں کی نجکاری کے حوالے سے جھوٹ بولا جا رہا ہے۔

 

دورہ پشاور میں وزیراعظم عمران خان نے شوکت خانم کی فنڈزریزنگ تقریب سے خطاب کر تے ہوئے کہنا تھا کہ پاکستانی اپنے لیے نہیں دوسروں کے لیے جیتے ہیں، پاکستانی کھلےدل کےسخی لوگ ہیں، ملک چلانے کے لیے اسی قوم سے پیسہ اکٹھا کر کے دکھاؤں گا، امید ہے کراچی کے سمندر سے ہمیں گیس مل جائے گی، اسکے بعد 50 سال تک ہمیں کسی کی بھی ضرورت نہیں پڑے گی۔ کسی ہسپتال کی نجکاری نہیں کر رہے۔

 

وزیراعظم عمران خان نے مزید کہا کہ ہسپتالوں کی نجکاری کے حوالے سے جھوٹ بولا جا رہا ہے، ہم سرکاری ہسپتالوں کو ٹھیک کریں گے۔ شوکت خانم ہسپتال میں 75فیصد مریضوں کا علاج مفت ہوتا ہے، کینسر کا علاج سب سے مہنگاعلاج ہے، دنیا میں واحد ہسپتال ہے جو کنسر کا علاج مفت کرتا ہے، شوکت خانم ہسپتال کی تعمیر کے لیے دنیا بھر سے فنڈز اکٹھے کیے۔ پاکستان کے 90 فیصدغریب افراد کینسر کا علاج نہیں کرا سکتے، آج لاہور کی طرح شوکت خانم پشاور میں مفت علاج کر رہا ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم عمران خان نے قبائلیوں کی فلاح و بہبود کے لئے نیا نظام متعارف کرانے کی نوید سنا دی۔ نیا نظام قبائلی روایات سے متصادم نہیں ہو گا، پشاور میں خیبر کے قبائلی جرگے سے خطاب میں وزیراعظم کا کہنا تھا کہ نئے پاکستان میں ایک ہزار ارب قبائلی علاقوں پر خرچ کرنے کا منصوبہ ہے، نئے نظام میں قومی اور صوبائی اسمبلی میں قبائلی علاقوں کی نشتیں بھی بڑھیں گی۔ پنجاب میں بھی ویلج سسٹم لا رہے ہیں، فنڈز براہ راست عوام کے پاس جائیں گے۔

 

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ قبائلی اضلاع کو کے پی میں ضم کرنا آسان کام نہیں تھا۔ انہوں نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں قربانیوں پر قبائلی عوام کو خراج تحسین بھی پیش کیا، اس سے قبل وزیراعظم عمران خان نے پشاور میں صوبائی کابینہ کے اجلاس کی صدارت کی۔ ملک کی مجموعی سیاسی اور معاشی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم کو قبائلی علاقوں کی ترقی کے اقدامات سے بھی آگاہ کیا گیا۔ وزیراعظم سے گورنر اور وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا کی ملاقات بھی ہوئی۔

عطاء سبحانی  4 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں