پاکستان افغانستان میں کسی بھی اندرونی تنازع کا حصہ نہیں ہو گا:وزیراعظم

اسلام آباد(پبلک نیوز) وزیراعظم عمران خان کا پالیسی بیان، افغانستان کے اندرونی تنازعات کا حصہ نہیں بنیں گے۔ افغانستان امن عمل تاریخی قرار، پاکستان امن عمل کے اگلے مراحل کی بھی حمایت کرے گا۔

 

پاکستان کی ترجیح ہمیشہ سے افغانستان کا امن، افغان قیادت میں افغان امن مذاکرات کی حمایت میں بھی پیش پیش، ہارٹ آف ایشیاء کا روح روا پاکستان، وزیراعظم عمران خان نے دے دیا اہم بیان۔ وزیراعظم کو افغان تنازعات میں چالیس سالوں سے افغانستان اور پاکستان کے نقصان کا ادراک، افغانستان امن عمل کوخطے میں امن کے لئے ایک تاریخی موقع قرار دیتے ہوئے مکمل حمایت کا اعلان دہرایا اور ساتھ ہی بتا دیا! پاکستان نے امن عمل کی کامیابی کے لیے تمام سفارتی اور سیکیورٹی کوششیں کی ہیں۔

 

وزیراعظم کا کہنا ہے کہ پاکستان اب افغانستان میں کسی بھی اندرونی تنازعات کا حصہ نہیں ہو گا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان بات چیت کے اگلے منطقی مرحلے کی بھی حمایت کرے گا، جہاں افغان قیادت خود اپنے ملک کے مستقبل کا فیصلہ کرے گی۔ وزیراعظم نے کہا کہ نام نہاد نفرت پسند، امن عمل کو کمزور کرنے والے، قابل مذمت ہیں۔ وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ پاکستان زبردستی مذاکرات میں افغان مسلئے کا حل تلاش کرنے کے حق میں نہیں۔ انہوں نے مذاکرات میں شامل تمام دھڑوں کو اس تاریخی لمحے کی اہمیت کو تسلیم کرنے پر زور دیا۔

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں