چیئرمین نیب نے خواجہ سعد رفیق کیخلاف انکوائریوں کی منظوری دے دی

لاہور(پبلک نیوز) قومی احتساب بیورو(نیب) نے سابق وزیرریلوے خواجہ سعد رفیق کے خلاف گھیرا تنگ کر لیا۔ ریلوے کی اربوں روپے مالیت کی زمین کوڑیوں لیز پر دینے، 55 کولو موٹیوز کی مہنگے داموں خریداری سمیت 6 مزید انکوائریز کا آغاز کیا جائے گا۔

پاکستان ریلوے میں اربوں روپے کرپشن کہانی پبلک نیوز کی زبانی، خواجہ سعد رفیق نے ریلوے وزارت کے دوران اختیارات کا بے بہا استعمال کیا اور قومی خزانے کو اربوں روپے کا نقصان پہنچایا۔

چیئرمین نیب جسٹس ر جاوید اقبال نے خواجہ سعد رفیق کے خلاف درج شکایات پر پر تحقیقات کے مکمل ہونے کے بعد انکوائری کی منظوری دے دی۔ خواجہ سعد رفیق پر الزام ہے کہ انہوں نے دوہزار تیرہ میں ایم ڈی ریڈمکو کے زریعے ریلوے کی اربوں روپے مالیت کی زمینیں کوڑیوں کے بہاو اپنی منظور نظر ساتھیوں اور لیگی رہنماؤں کو دیں۔

نیب ذرائع کے مطابق خواجہ سعد رفیق کے خلاف اختیارات سے تجاوز، خلاف قانون بھرتیوں اور ملٹری ٹرین حادثے کی انکوائری رپورٹ پر اثر انداز ہونے کے الزامات ہیں جن کے خلاف ان کو نیب لاہور آفس طلب کیا جائے گا۔ چیرمین نیب نے خواجہ سعد رفیق کیخلاف پراگون سوسائٹی کیس میں انکوائری کی منظوری دی ہے جس کی تاریخیں وہ آج کل نیب میں بھی بھگت رہے ہیں۔

 

عطاء سبحانی  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں