حکومت نے اوگرا کی کارکردگی رپورٹ جاری کر دی

اسلام آباد(راجہ عثمان) موجودہ حکومت نے پہلے سال میں اوگرا کی کارکردگی رپورٹ جاری کر دی ہے۔ رپورٹ کے مطابق ایک سال میں آئل مارکیٹنگ کمپنیوں کے 9 لائسنسز جاری کئے گئے ہیں۔ 9 لائسنسز سے تیل و گیس کے شعبے میں ساڑھے چار ارب روپے کی سرمایہ کاری آئے گی۔ اوگرا نے 6 کمپنیوں کو پٹرولیم مصنوعات فروخت کرنے کی اجازت دی ہے۔ اوگرا نے 20 ہزار بیرل یومیہ صلاحیت کی حامل آئل ریفائنری کا لائسنس جاری کیا ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق ایل پی جی سٹوریج مارکیٹنگ اور آپریشنز کے 23 لائسنسز جاری کئے گئے ہیں۔ ایک سال میں ایل پی جی سٹوریج اور فلنگ پلانٹس کی تعمیر کے 46 لائنسز جاری کئے گئے۔ ایل پی جی آٹو ری فیولنگ سٹیشنز کے 11 لائسنسز جاری کئے گئے ہیں۔ ملک میں ایل پی جی ایئر مکس کے 8 لائسنسز جاری کئے گئے ہیں۔ ایک سال میں ایل پی جی سٹوریج ٹرمینل کے 2 لائسنسز جاری ہوئے۔

 

پابندی کی وجہ سے سی این جی سٹیشن کے قیام کا کوئی لائسنس جاری نہیں کیا گیا ہے۔ گیس کمپنیوں کے لئے گیس کی قیمتوں میں بھی اضافہ کیا گیا ہے۔ اوگرا نے ایک سال میں ویل ہیڈ پرائس کے 122 نوٹیفکیشن جاری کئے ہیں۔ مسابقتی گیس مارکیٹ کے فروغ کے لئے نیٹ ورک کوڈ کی منظوری دی گئی ہے۔ ایک سال میں اوگرا اتھارٹی کے صرف 45 اجلاس ہوئے۔ ایک سال میں شکایات کا ازالہ کر کے صارفین کو 10 کروڑ 69 لاکھ روپے کا ریلیف دیا گیا ہے۔

عطاء سبحانی  1 ماه پہلے

متعلقہ خبریں