آئندہ مالی سال20-2019 کے ترقیاتی بجٹ کی دستاویز پبلک نیوز کو موصول

اسلام آباد(پبلک نیوز) آئندہ مالی سال 20-2019 کے ترقیاتی بجٹ کی دستاویز پبلک نیوز کو موصول ہوگئی، آئندہ مالی سال کا ترقیاتی بجٹ 925 ارب روپے مقرر کیا گیا ہے۔ ایچ ای سی سمیت تعلیم کے ترقیاتی منصوبوں کیلئے 32 ارب رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

 

پبلک نیوز کو حاصل آئندہ مالی سال20کے ترقیاتی بجٹ کی دستاویز کے مطابق آئندہ مالی سال کا ترقیاتی بجٹ 925 ارب روپے مقرر کیے گئے۔ بیرونی ذرائع سے 126ارب اورمقامی سے 798 ارب روپے کا تخمینہ۔ وفاقی وزارتوں کے مںصوبوں کیلئے 372 ارب روپے مختص، آبی وسائل ڈویژن کیلئے 85 ارب روپے، ریلوے ڈویژن 16ارب، خزانہ ڈویژن کیلئے36 ارب 82 کروڑ مقرر، ہائیر ایجوکیشن کمیشن کیلئے 29 ارب روپے، وزارت امور کشمیر کیلئے 44 ارب 70 کروڑ مقرر کیے گئے ہیں۔

آئندہ مالی سال کے بجٹ میں قومی صحت کیلئے 13 ارب 37 کروڑ روپے، قومی تحفظ خوراک کیلئے 12 ارب روپے مختص، پلاننگ کمیشن کیلئے 7 ارب 96 کروڑ روپے۔ ڈیفنس ڈویژن کیلئے 45 کروڑ روپے مقرر، این ایچ کیلئے 156 ارب روپے مختص، بجلی کے منصوبوں کیلئے 41 ارب 89 کروڑ روپے، ایرا کیلئے 5 ارب روپے مقرر، آئی ڈی پیز کی بحالی اور امداد کیلئے 32 ارب روپے مقرر، سیکیورٹی کیلئے ساڑھے 32 ارب روپے مختص کیے گئے۔

 

دستاویز کے مطابق وزیراعظم یوتھ پروگرام کیلئے 10ارب روپے، قبائلی علاقوں کی ترقی کیلئے 22 ارب روپے، کلین گرین پروگرام کیلئے 2 ارب روپے مقرر، سماجی شعبے کی ترقی کیلئے 94 ارب روپے مختص، صحت اور آبادی سے متعلق منصوبوں کیلئے 20 ارب مختص، ایچ ای سی سمیت تعلیم کے ترقیاتی منصوبوں کیلئے 32 ارب رکھنے کا فیصلہ کیا گیا، ماحولیات کی بہتری کیلئے 8 ارب رکھنے کی تجویز، ایس ڈی جیز پروگرام کیلئے 24 ارب روپے رکھنے کی تجویز دی گئی۔

 

مالی سال کے بجٹ 20-2019 میں ترقیاتی منصوبوں پر 925 ارب روپے خرچ کیئے جائیں گے، انفراسٹرکچر کے منصوبوں کیلئے 371 ارب مختص کیئے جائیں گے، توانائی منصوبوں کیلئے 80 ارب روپے رکھنے کا فیصلہ اور ٹرانسپورٹ اور مواصلات کیلئے 200 ارب رکھنے کی تجویز دی گئی، پانی سے متعلق منصوبوں پر 80 ارب روپے خرچ کیئے جائیں گے۔ بجٹ میں آزاد کشمیر اور فاٹا کیلئے 49 ارب روپے رکھنے کی تجویز، فاٹا کے پختوانخواہ میں ضم اضلاع کیلئے 24 ارب روپے رکھنے کی تجویز دی گئی ہے۔

عطاء سبحانی  1 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں