پیرا گون سوسائٹی ایل ڈی اے سے منظور شدہ نہیں، خواجہ برادران بینی فیشل اونرز ہیں: قیصر امین بٹ

لاہور (پبلک نیوز) نیب کی زیر حراست ملزم پیراگون سوسائٹی کے ڈائریکٹر قیصر امین بٹ کے اہم انکشافات سامنے آنے لگے۔ انھوں نے بتایا کہ خواجہ برادران بینی فیشل اونرز ہیں۔ لین دین کا کام ندیم ضیا کرتا تھا اور سوسائٹی بھی ایل ڈی اے سے منظور شدہ نہیں۔

تفصیلات کے مطابق پیراگون ہاؤسنگ سوسائٹی اسکینڈل میں گرفتار قیصر امین بٹ کو چیئرمین نیب جسٹس ریٹائرڈ جاوید اقبال کے روبرو پیش کیا گیا۔ قیصر امین بٹ نے چیئرمین نیب کے سامنے وعدہ معاف گواہ کے لیے دی گئی درخواست کی بھی تصدیق کی۔

چیئرمین نیب کے سامنے قیصر امین بٹ سے سوال کیا گیا کہ کیا ان پر کسی کا دباؤ تو نہیں؟ کیا وہ یہ بیان اپنے ہوش و حواس میں دے رہے ہیں؟ نیب ذرائع کے مطابق قیصر امین بٹ کی پیشی کے دوران آڈیو اور ویڈیو ریکارڈنگ بھی کی گئی۔

قیصر امین بٹ نے اسکینڈل میں ملوث افراد کے نام بھی بتا دیئے۔ نیب ذرائع کا دعویٰ ہے کہ قیصر امین بٹ وعدہ معاف گواہ بننے سے متعلق اپنی درخواست کی تصدیق عدالت میں بھی کریں گے۔

ذرائع کے مطابق پیراگون کے ڈائریکٹر قیصر امین بٹ نے دوران تفتیش انکشاف کیا ہے کہ وہ خواجہ برادرون کی ہدایت پر سندھ میں روپوش ہوئے جبکہ قیصر امین بٹ اور ندیم ضیا خواجہ برادران کو کیش کی صورت میں رقم کی ادائیگی بھی کرتے تھے۔ قیصر امین بٹ نے تحقیقات میں انکشاف کیا کہ خواجہ برادران پیراگون سوسائٹی کے بینی فیشل اونر ہیں۔

نیب کے مطابق ایل ڈی اے کو آج تک پیراگون سوسائٹی کا مکمل ریکارڈ فراہم نہیں کیا گیا اور نہ ہی ایل ڈی اے سے سوسائٹی کی منظوری کرائی گئی جبکہ لگ بھگ تمام تعمیرات ٹی ایم اے میں جمع شدہ نقشہ جات سے ہٹ کر کی گئی ہیں۔

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں