الیکشن میں کامیابی کالعدم قرار، قاسم سوری اسمبلی کے ممبر بھی نہ رہے

 

پبلک نیوز: الیکشن ٹریبونل نے این اے 265 کی انتخابی عذرداری پر فیصلہ سنا دیا ہے ڈپٹی اسپیکر قاسم سوری اسمبلی کے ممبر بھی نہیں رہے ہیں۔ الیکشن ٹربیونل نے این اے 265 پر دوبارہ انتخابات کرانے کا حکم دے دیا ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق الیکشن ٹریبونل نے حلقہ این اے 265 کی انتخابی عذرداری پر فیصلہ سنا دیا۔ ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم سوری کی بطور ایم این اے کامیابی کالعدم قرار دے دی۔ این اے 265 پر دوبارہ انتخابات کرانے کا حکم دے دیا۔

 

بلوچستان ہائی کورٹ میں الیکشن ٹریبونل کے جج جسٹس عبداللہ بلوچ نے ڈیپٹی اسپیکر قومی اسمبلی قاسم خان سوری کی کامیابی کے خلاف بی این پی مینگل کے رہنما اور حلقے سے ہارنے والے امیدوار حاجی لشکری رئیسانی کی دائر درخواست پر سماعت کی۔ الیکشن ٹریبونل کے احکامات پر نادرا کی جانب سے پیش کی گئی رپورٹ کے مطابق حلقہ این اے 265 کے 52 ہزار ووٹوں کی تصدیق نہیں ہو سکی۔

 

ٹریبونل کی جانب سے ڈپٹی اسپیکر قومی اسمبلی اور تحریک انصاف کے کامیاب امیدوار قاسم خان سوری کی کامیابی کالعدم قرار دیتے ہوئے حلقے کے انتخابات دوبارہ کرانے کے احکامات جاری کر دیے گئے۔

احمد علی کیف  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں