سیکیورٹی مسائل کے باعث کارباری سرگرمياں کم ہوئیں مگر اب صورتحال مختلف ہے: رزاق داود

اسلام آباد (پبلک نیوز) وزير اعظم کے مشير برائے تجارت رزاق داود نے کہا ہے کہ پاکستان ميں سیکیورٹی مسائل کے باعث کاروباری سرگرمياں کم ہوئیں ليکن اب صورتحال مختلف ہے۔ ديگر ممالک سميت ملائشيا بھی پاکستان ميں سرمايہ کاری کرنا چاہتا ہے۔

 

وزير اعظم کے مشير تجارت رزاق داؤد کا ميڈيا سے گفتگو کرتے ہوئے کہنا تھا کہ چین کے بعد یو اے ای، ترکی اور اب ملیشیاء کے ساتھ تجارت کر رہے ہیں۔ سیکیورٹی صورتحال بہتر ہونے کے باعث کاروباری طبقہ آ رہا ہے۔ مليشيا کا کاروباری طبقہ بھی سرمايا کاری کرنے کا خواہش مند ہے۔

 

ان کا کہنا تھا کہ ملیشیاء کے ساتھ بی ٹو بی معاہدے ہوں گے۔ ہمیں فوڈ ایکسپورٹ کرنے کے لیے معیار کا خاص خیال رکھنے کی ضرورت ہے۔ ملیشیاء کے بڑے کاروباری افراد ہلال فوڈ میں سرمایہ کاری کرنے کے خواہش مند ہیں جو پاکستان کي معشيت کي بہتری کی طرف سنگ ميل ثابت ہو گا۔

 

رزاق داود کا کہنا تھا کہ ملیشیاء کی سرمایہ کاری کرنے والی کمپنیوں کے لیے وزیراعظم سے خصوصی ملاقات کی ہے۔

حارث افضل  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں