پاکستان کو ڈو مور کہنے والے اب بھارت کو ڈو مور کہیں، فردوس عاشق اعوان

 

اسلام آباد (پبلک نیوز) معاون خصوصی وزیراعظم فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ کابینہ اجلاس میں 10 نکاتی ایجنڈے پرغور کیا گیا۔ وزیراعظم عمران خان کشمیریوں کی آواز بن گئے ہیں۔ کشمیر کے مسئلے پر فوکل گروپ بنایا گیا ہے۔ خواجہ سراؤں کے حقوق کے لیے قانون سازی کی جائے گی۔

 

تفصیلات کے مطابق وفاقی کابینہ اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ کابینہ اجلاس میں 10 نکاتی ایجنڈے پرغور کیا گیا۔ وزیراعظم نے کابینہ کو قوم سے خطاب پر اعتماد میں لیا۔ کابینہ نے وزیراعظم کی سفارتی کوششوں کی تعریف کی۔ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم بے نقاب کریں گے۔ وزیراعظم عمران خان کشمیریوں کی آواز بن گئے ہیں۔

 

معاون خصوصی فردوس اعوان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم نے جمعہ کا مبارک دن مقدس مشن کے لیے وقف کیا۔ قومی یکجہتی کی شکل میں ہر پاکستانی بھارت کو پیغام پہنچائے گا۔ وزیراعظم نے کشمیریوں کی جدوجہد کو فیصلہ کن تحریک میں بدل دیا۔ کشمیر کے مسئلے پر فوکل گروپ بنایا گیا ہے۔ فوکل گروپ میں اپوزیشن کے ارکان بھی شامل ہیں۔ کشمیریوں کے لیے قوم کا سڑکوں پر نکلنا دنیا کے لیے پیغام ہے۔

فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ پاکستان کو ڈو مور کہنے والے اب بھارت کو ڈو مور کہیں۔ وزیراعظم جنرل اسمبلی میں کشمیریوں کا مقدمہ لڑنے جا رہے ہیں۔ ہفتے میں ایک بار ہر پاکستانی کشمیریوں سے یکجہتی کرے گا۔ وزیراعظم نے ہر منصوبے کی بروقت تکمیل یقینی بنانے کی ہدایت کی۔ کابینہ کو بچوں اور خواجہ سراؤں کا استحصال روکنے بارے میں بریف کیا گیا۔

 

ان کا مزید کہنا تھا کہ غریب قیدیوں کے جرمانے ادا کرنے کی بھی منظوری دی گئی۔ انٹر سٹی بسوں میں معذوروں کے لیے سیٹیں ہوں گی۔ خواجہ سراؤں کے حقوق کے لیے قانون سازی کی جائے گی۔ ایران اورعراق گیس بلوں کو جمع کرانے کے لیے ڈیٹا کا جائزہ لیا جا رہا ہے۔ پشاور میں سکھوں کا بند گوردوارہ کھول دیا گیا۔

 

احمد علی کیف  3 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں