"امریکہ خاموشی سے سعودی عرب کیساتھ ایٹمی معاہدہ پر کام کر رہا ہے"

پبلک نیوز: امریکا خاموشی سے سعودی عرب کے ساتھ نیوکلیئر پاور پلانٹ کی تعمیر کے معاملے پر کام کر رہا ہے۔ خبر ایجنسی روئٹرز نے انکشاف کر دیا۔ امریکی سیکرٹری توانائی 6 بار نیوکلئیر کمپنیوں کو دستاویزات منتقلی کی اجازت دے چکے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق امریکہ اور سعودی عرب کے درمیان ایٹمی معاہدے کے معاملہ پر روئٹرز نے انکشاف کیا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ امریکا کی نیوکلیئر پاور ٹیکنالوجی کو سعودی عرب کے ساتھ شیئر کرنے کی وسیع ڈیل پر کام کر رہی ہے۔ جس کا مقصد کم سے کم دو نیوکلیئر پاور پلانٹ تعمیر کرنا ہے۔

اس حوالے سے امریکی سیکرٹری توانائی رک پیری نے 6 بار نیوکلئیر کمپنیوں کو دستاویزات منتقلی کی اجازت دی۔ امریکی حکام کے مطابق کمپنیوں نے ٹرمپ انتظامیہ سے معاملہ خفیہ رکھنے کی درخواست کی تھی۔

تاہم فی الحال کسی قسم کے آلات یا مشینری سعودی عرب منتقل نہیں کی گئی۔ جبکہ ایٹمی بجلی گھروں کی تعمیر کے ٹھیکے میں امریکہ کے ساتھ روس اور جنوبی کوریا بھی دلچسپی رکھتے ہیں۔

احمد علی کیف  2 ماه پہلے

متعلقہ خبریں