ملک بھر میں شب معراج مذہبی عقیدت و احترام سے منائی گئی

اسلام آباد(پبلک نیوز) ملک بھر میں شب معراج مذہبی عقیدت واحترام سے منائی گئی۔ شب معراج وہ رات ہے جب اللہ رب العزت نے اپنے حبیب نبی محترم حضرت محمد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کو معراج کا شرف عطا فرمایا اور پانچ نمازوں کا تحفہ بھی عطا کیا۔

 

رحمتوں اور برکتوں کی رات شب معراج مذہبی عقیدت و احترام کے ساتھ منائی گئی۔ نبی آخرالزماں حضوراکرمﷺ کے معراج کی رات ہے، ہجرت سے 5 سال قبل حضرت جبریلؑ براق لے کر نبی آخرالزماں ﷺکی خدمت میں حاضر ہوئے اور عرض کیا، اے اللہ کے رسول، آپ کا رب آپ سے ملاقات کا خواہشمند ہے، جس کے بعد آپﷺ کو مسجد حرام سے مسجد اقصیٰ لے جایا گیا تھا، جہاں تمام انبیائے کرام نے آپ ﷺ کی اقتداء میں نماز ادا کی، پھر آپ ﷺ جنت کے جانور البراق پر سوار ہو کر اللہ تعالیٰ سے ملاقات کیلئے عرش معلی تک تشریف لے گئے۔

 

سفر معراج کے دوران رسول کریمﷺ کو جنت اور دوزخ دکھائی گئیں، اس واقعے کو قرآن کریم کی سورۃ اسراء پارہ نمبر 15 کی ابتدائی آیات میں بیان کیا گیا ہے۔ شب معراج کو اہل ایمان نوافل ادا کرتے ہیں۔ درود و سلام اور نعت خوانی کی محفلیں سجائی جاتی ہیں۔ گناہوں سے بخشش اور ملکی سلامتی کیلئے رب ذوالجلال کی بارگاہ میں التجائیں کی جاتی ہیں اور اللہ تعالیٰ سے رحمت اور اس کی مغفرت طلب کی جاتی ہے۔

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں