عمران خان کا کوئی کمال نہیں، امداد آرمی چیف کی وجہ سے مل رہی ہے: اپوزیشن لیڈر

اسلام آباد (پبلک نیوز) اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف نے کہا ہے کہ ادوایات کی قیمتوں میں 9 سے 15 فیصد اضافہ کیا گیا۔ پورے ملک میں مہنگائی کی شدید لہر ہے۔ گردشی قرضہ دوبارہ سراٹھا رہا ہے۔ آج مہمند ڈیم کے حوالے سے بات کرنا چاہتا ہوں۔ ملک میں آبی ذخائر بنانا وقت کی ضرورت ہے۔

 

اپوزیشن لیڈر میاں شہباز شریف کا قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے کہنا تھا کہ ادوایات کی قیمتوں میں 9 سے 15 فیصد اضافہ کیا گیا۔ پورے ملک میں مہنگائی کی شدید لہر ہے۔ گردشی قرضہ دوبارہ سراٹھا رہا ہے۔ آج مہمند ڈیم کے حوالے سے بات کرنا چاہتا ہوں۔ ملک میں آبی ذخائر بنانا وقت کی ضرورت ہے۔ ڈیمز بنانا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ 800 میگاواٹ کا مہمند ڈیم دریائے سوات پر بنایا جائے گا۔

 

اپوزیشن لیڈر کا کہنا تھا کہ مہمند ڈیم کے لیے ہماری حکومت نے 2 ارب مختص کیے۔ بھاشا ڈیم کے لیے ن لیگ کی حکومت نے 100 ارب روپے میں زمین خریدی۔ آبی ذخائر اور ہائیڈرل پاور منصوبے وقت کی اہم ضرورت ہے۔ ہماری حکومت نے جنگی بنیادوں پر لوڈشیڈنگ کا خاتمہ کیا۔ ہم نے 3 پلانٹ لگائے جو 3600 میگا واٹ بجلی پیدا کر رہے ہیں۔ ہماری حکومت سے پہلے 20،20 گھنٹے لوڈ شیڈنگ ہوتی تھی۔ ایل این جی درآمد میں 160 ارب روپے کی بچت ہوئی۔

 

 

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ سعودی عرب، یواے ای اور چین کی مہربانی مشکل وقت میں ساتھ دیا، اس میں حکومت یا عمران خان کا کوئی کمال نہیں، سپہ سالار کی وجہ سے پاکستان کی مدد کی جا رہی ہے، کسی کوغلط فہمی میں نہیں رہنا چاہیے۔ یہ مفادات کا ٹکراؤ ہے، حکومت شفافیت اور میرٹ کا دن رات ڈھنڈورا پیٹتی ہے۔ ہمارا عبدالرزاق داؤد سے کوئی گلا نہیں، وہ اچھے انسان ہیں، بات اس وقت پاکستان کی ایک ایک پائی کی ہے، وہ حکومتی مشیر اور اپنے بیٹے کی کمپنی کے شیئر ہولڈر ہیں۔

 

ان کا کہنا تھا کہ میں الزام تراشی نہیں کرنا چاہتا لیکن ایسی کیا قیامت آگئی تھی کہ دوسری بولی کو مسترد کردیا گیا، دوسری کمپنی کو ٹیکنیکل بنیاد پر ٹھیکہ نہیں دیا گیا، اگر کوئی الزام تراشی کرے گا تو پھر وہ بھرے گا، اس طرح ٹھیکہ دیں گے تو اعتراض ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ مہمند ڈیم کی تکمیل کیلئے پانچ چھ سال لگیں گے، ایسی کیا جلدی تھی کہ یہ ٹھیکہ سنگل بڈ پر دیا گیا ہے۔

حارث افضل  5 ماه پہلے

متعلقہ خبریں