غیر ملکی سرمایہ کاری سے معیشت میں استحکام آئے گا: شاہ محمود قریشی

اسلام آباد(پبلک نیوز) وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا ہے کہ بھارت کشیدگی کو ہوا دے رہا ہے، پاکستان نے ذمہ دارانہ کردار ادا کیا، سعودی عرب، ایران اور دیگر ملکوں کے ساتھ مل کر معیشت کی بہتری کے لیے اقدامات کررہے ہیں۔

 

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے اسلام آباد میں ہونے والی سرمایہ کاری کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پہلی بار حکومت نے اقتصادی ڈپلومیسی شروع کی، جس کے 10 نکات ہیں اور بیرونی سرمایہ کاری کو لانا اقتصادی ڈپلومیسی کا حصہ ہے۔ چین، سعودی عرب، ایران اور متحدہ عرب امارات کے ساتھ تجارتی تعلقات بہتر ہوئے ہیں۔ امن اور خوشحالی سے طویل المدتی اہداف حاصل کیے جا سکتے ہیں۔ پاکستانی معیشت چیلنجز اور مواقع کی معیشت ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا کہ سعودی عرب، ایران اور دیگر ملکوں کے ساتھ مل کر معیشت کی بہتری کے لیے اقدامات کر رہے ہیں۔ غیر ملکی سرمایہ کاری سے معیشت میں استحکام آئے گا۔ ملک میں سیاحت کو بھی فروغ دیا جا رہا ہے۔ عالمی منڈیوں میں پاکستانی برآمدات کا حصہ بڑھانا اور بیرونی سرمایہ کاری کو لانا اقتصادی ڈپلومیسی کا حصہ ہے۔ پاک چین آزادانہ تجارتی معاہدے میں پاکستانی مصنوعات کو ترجیح دی گئی ہے، اگر پاکستانی مصنوعات چین کی 10 فیصد مارکیٹ تک بھی رسائی حاصل کر لیں، تو اربوں روپے کی برآمدات ہوں گی۔

 

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ پاک چین آزاد تجارتی معاہدے کا مقصد پاکستانی صنعت کو فروغ دینا ہے، بڑے ممالک پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے تیار ہیں اور پاکستان اس وقت سرمایہ کاری کے لیے بہترین ملک ہے۔ قطر ایک لاکھ پاکستانیوں کو ملازمتیں فراہم کرے گا اور جاپان تکنیکی تربیت فراہم کرے گا۔ دوست ممالک نے ادھار پر تیل دینے کی سہولت دی۔ سائنس ڈپلومیسی چلائی جا رہی ہے۔ غیر ملکی سرمایہ کاری سے معیشت میں استحکام آئے گا۔ ملک میں سیاحت کو بھی فروغ دیا جا رہا ہے۔

عطاء سبحانی  2 ہفتے پہلے

متعلقہ خبریں