شہبازشریف کی آشیانہ اسکینڈل میں ضمانت کیلئے لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر

لاہور (پبلک نیوز) آشیانہ اقبال اسکینڈل کی گتھی سلجھنے کی بجائے مزید الجھنے لگی۔ چودھری لطیف اینڈ کمپنی نے اپنی مرضی سے ٹھیکہ واپس لیا۔ ادھر شہبازشریف نےآشیانہ اسکینڈل میں ضمانت  کے لیے لاہورہائیکورٹ میں درخواست دائرکر دی۔

سابق وزیراعلیٰ نے مؤقف اختیارکیا ہے کہ نیب نے قانون کےمنافی کیس بنا کر سیاسی بنیادوں پرانہیں گرفتار کیا۔ دوسری طرف اپوزیشن لیڈرکی بطورچئیرمین پی اے سی تقرری کے خلاف درخواست کردی گئی۔

آشیانہ اقبال اسکینڈل مزید الجھ گیا۔ پبلک نیوز نے کھوج لگایا تو معلوم ہوا چودھری لطیف اینڈ کمپنی نےاپنی مرضی سے ٹھیکہ واپس لیا۔ چودھری لطیف اینڈ کمپنی اورپنجاب لینڈ ڈویلپمنٹ اتھارٹی کےمعاہدےکی کاپی پبلک نیوز نے حاصل کر لی۔

سابق وزیراعلیٰ شہباز شریف نے آشیانہ اسکینڈل میں ضمانت کے لیے لاہورہائیکورٹ میں درخواست دائرکردی ہے۔ شہبازشریف نےوکلاء کےذریعے درخواست میں مؤقف اختیارکیا ہے کہ نیب نےخلاف قانون سیاسی بنیادوں پر گرفتارکیا۔

سابق وزیراعلیٰ کا کہنا ہے کہ جو بھی کیا آئین اور قانون کےمطابق کیا،کسی کو بھی سرکاری زمین غیرقانونی طریقے سےنہیں دی۔ لہذا ضمانت پر رہا کیا جائے۔

واضح رہے کہ اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کی بطور چئیرمین پی اے سی تقرری کے خلاف درخواست پر اسلام آباد ہائیکورٹ نے محفوظ فیصلہ سنا دیا۔ جسٹس اطہر من اللہ نے درخواست کو مسترد کر دیا۔

احمد علی کیف  3 ماه پہلے

متعلقہ خبریں